کراؤن گروپ نے الیکٹرک کار، رکشہ اور سکوٹر پاکستان میں متعارف کرادیا

کراون گروپ آف کمپنیز نے چین کے اشتراک سے دو ارب روپے کی سرمایہ کاری سے پاکستان میں پہلی بار الیکٹرک کار، موٹر سائیکل اور رکشہ متعارف کروادیا۔

تفصیلات کے مطابق ٹیکنالوجی کی دنیا میں جدت لاتے ہوئے پاکستان کی آٹو سیکٹر مارکیٹ میں کراون کمپنی کی جانب سے الیکٹرک سے چلنے والی کار، موٹرسائیکل اور رکشہ متعارف کروا دیئے گئے ہیں۔ جمعہ کے روز منعقدہ تعارفی تقریب میں کراؤن کی تمام پرانی اور نئی الیکٹرک وہیکلز کی نمائش بھی کی گئی۔

منعقدہ تعارفی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کراؤن گروپ کے چیئرمین فرحان حنیف نے کہا کہ چین اور ہمارے باہمی اشتراک سے ہم نے2ارب روپے کی سرمایہ کاری سے پاکستان میں الیکٹرک گاڑیاں متعارف کروائی ہیں۔جبکہ فور وہیلر الیکٹرک کارکی مینوفیکچرنگ حکومت کی الیکٹرک پالیسی کے اعلان سے مشروط ہے۔

تقریب سے خطاب میں انہوں نے امکان ظاہر کیا کہ حکومت اس حوالے سے دو سے تین ماہ میں الیکٹرک پروڈکٹ کے حوالے سے پالیسی متعارف کروا دی گی۔ تقریب ادارے خیال کرتے ہوئے ہم کا مزید کہنا تھا کہ ہماری کمپنی موٹرسائیکل اور تھری وہیلر کے لحاظ سے مارکیٹ میں لیڈ برانڈ ہے۔ جو صارفین کو بین الاقوامی معیار کی بعد از فروخت سہولیات فراہم کر رہی ہے۔

یاد رہے کہ الیکٹرک کار کی تعارفی قیمت4لاکھ روپے، تھری وہیلر کی 3لاکھ روپے اور الیکٹرک موٹر بائیک کی 55ہزار روپے قیمت مقرر کی گئی ہے۔

  • Something I don’t understand in the whole Electric vehicle scam is how will this be cheaper in a country where electricity is most expensive in the region. So, this look like a new CNG scam that we will fall for and will pay effectively more than regular fuel


  • 24 گھنٹوں کے دوران 🔥

    View More

    From Our Blogs in last 24 hours 🔥

    View More

    This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept

    >