پاکستان کا پھلوں اور سبزیوں کی برآمدات میں ریکارڈ منافع

پاکستان نے رواں برس پھل و سبزی کی برآمدات سے ریکارڈ آمدن حاصل کی ہے، مالی سال 2019-20 کے دوران آمدن میں 12.5 فیصد اضافہ ریکارڈ کیا گیا ۔

کورونا وائرس کے عالمی بحران میں دنیا بھر کی ایکسپورٹس متاثر ہوئی ہیں مگر پاکستان نے صرف پھل و سبزیاں بیرون ملک ایکسپورٹ کرکے 73 کروڑ ڈالر کی آمدن کمائی ہے، گزشتہ برس پھلوں کی ایکسپورٹ میں 3.8 فیصد جب کہ سبزیوں کی ایکسپورٹ میں 28 فیصد اضافہ دیکھا گیا تھا، اور مجموعی طور پر 46.1 کروڑ ڈالر سے زائد کا زرمبادلہ حاصل کیا گیا تھا۔

ایکسپورٹرز کے مطابق کورونا وائرس کے بحران اور لاک ڈاؤن کی صورتحال میں جب دنیا بھر کی تجارت جمود کا شکار تھی ایسے میں امپورٹ کرنے والے ممالک میں پاکستانی پھلوں اور سبزیوں کی بروقت ڈیلوری تقریبا ناممکن تھی، لیکن ایکسپورٹرز نے اسی رکاوٹ کو اپنے مفاد میں استعمال کرتے ہوئے ایکسپورٹ کو بڑھایا اور حقیقی پالیسیوں کو اپناتے ہوئے اپنی آمدن میں اضافہ کیا۔

آل پاکستان فروٹس اینڈ ویجیٹیبل ایکسپورٹرز، امپورٹرز اینڈ مرچنٹ ایسوسی ایشن(پی ایف وی اے) کا کہنا تھا کہ پھل و سبزیاں اگانے والے کسانوں اور تاجروں کی کوششوں کے علاوہ وفاقی حکومت کی اس معاملے میں خصوصی کاوشوں کی وجہ سے ایکسپورٹ میں اضافہ ہوا، درپیش مسائل کو بروقت حل کرنے کے حکومتی اقدامات قابل تحسین رہے۔

پی ایف وی اے کے وحید کا کہنا تھا کہ ایکسپورٹ کیلئے ایران اور افغانستان کی منڈیوں پر زیادہ کام کیا گیا ، کورونا وائرس کے عالمی بحران کی وجہ سے دنیا بھر میں پھلوں اور سبزیوں کی مانگ بڑھ گئی ہے اور پاکستانی ایکسپورٹرس اس ضرورت کو پورا کرنے میں پیش پیش رہے اور کنوں، آلو اور پیاز کی بین الاقوامی مانگ کو ٹرانسپورٹ اور لاک ڈاؤن کی رکاوٹو ں کے باوجود پورا کیا۔


Featured Content⭐


24 گھنٹوں کے دوران 🔥


From Our Blogs in last 24 hours 🔥


>