پاکستانی روپے کی قدر میں اضافہ، ڈالر کی قیمت 5 ماہ کی کم ترین سطح پر آگئی

انٹر بینک میں ڈالر کی تاریخ کی سب سے اونچی اڑان، بلند ترین سطح پر پہنچ گیا

پاکستانی روپے کی قدر میں اضافہ، ڈالر کی قیمت 5 ماہ کی کم ترین سطح پر آگئی

پاکستانی روپیہ ہر گزرتے دن کیساتھ تگڑا ہونے لگا، ڈالر کی قیمت 5 ماہ کی کم ترین سطح پر آگئی، 29 مئی کے بعد اب انٹربینک میں امریکی کرنسی کی قیمت 162.86روپے کی سطح تک آگئی، جبکہ اوپن کرنسی مارکیٹ میں قیمت 163.48روپے تک آگئی۔

تفصیلات کے مطابق مقامی کرنسی مارکیٹوں میں بدھ کو امریکی ڈالر سمیت دیگرغیر ملکی کرنسیوں کے مقابلے میں پاکستانی روپے کی قدر میں بہتری دیکھنے میں آئی جس کے باعث انٹر بینک میں ڈالر 162.86روپے اور اوپن مارکیٹ میں163.48روپے کی سطح پر آگیا۔

فاریکس ایسوسی ایشن آف پاکستان کے مطابق بدھ کو انٹر بینک میں ڈالر کی قدر میں62 پیسے کی کمی ہوئی جس سے ڈالر کی قیمت خرید163.48 سے گھٹ کر 162.86 ہوگئی۔

بتایا گیا ہے کہ توقع سے زائد ترسیلات زر موصول ہونے کی وجہ سے کرنسی مارکیٹ میں پاکستانی روپے کی قدر میں اضافہ جبکہ امریکی ڈالر کی قیمت میں کمی آ رہی ہے۔

حکومت کی جانب سے حال ہی میں بیرون ممالک پاکستانیوں کیلئے روشن پاکستان ڈیجیٹل اکاونٹ متعارف کروایا گیا تھا۔ بیرون ممالک پاکستانیوں کی جانب سے اب بینکنگ چینلز کے ذریعے رقوم پاکستان بھیجی جا رہی ہیں، جس کی وجہ سے نہ صرف ترسیلات زر میں اضافہ ہوا ہے، بلکہ ڈالر کی قیمت میں کمی بھی آ رہی ہے۔

واضح رہے کہ رواں مالی سال کی پہلی سہ ماہی میں پاکستان کو ریکارڈ 7 ارب ڈالرز سے زائد ترسیلات زر موصول ہوئی ہیں.


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >