پاکستان سٹاک ایکسچینج شدید مندی کی لپیٹ میں، ڈالر مزید سستا

تین روزہ تیزی کے بعد سٹاک ایکسچینج شدید مندی کی لپیٹ میں، ڈالر مزید سستا

رواں کاروباری ہفتے کے پہلے تینوں روز تیزی کے بعد پاکستان سٹاک ایکسچینج ایک دفعہ پھر شدید مندی کی لپیٹ میں آ گئی ہے، پاکستان سٹاک ایکسچینج میں رواں ہفتے کے چوتھے کاروباری روز کے دوران 625 پوائنٹس کی بڑی کمی دیکھی گئی ہے۔ 

کاروباری ہفتے کے چوتھے روز پاکستان اسٹاک ایکسچینج میں کاروباری روز کے آغاز سے ہی مندی کا رجحان دیکھنے کو ملا اور سرمایہ کاروں نے منافع کے حصول کی غرض سے شیئرز کی خریداری سے زیادہ فروخت کو ترجیح دی۔

سٹاک ایکسچینج میں آئی شدید مندی کی وجہ سے کاروباری دن کے اختتام پر مارکیٹ 625 پوائنٹس کی کمی کے بعد 100 انڈیکس 46 ہزار 142 پوائنٹس کی سطح پر بند ہوا، جس کے باعث سرمایہ کاروں کو 90 ارب روپے سے زائد کا نقصان اٹھانا پڑا۔ 

دوسری جانب امریکی ڈالر کے مقابلے میں پاکستانی روپے کی قدر میں اضافہ کا تسلسل برقرار ہے اور رواں کاروباری ہفتے کے چوتھے روز بھی امریکی ڈالر کی قدر میں 33 پیسے کی کمی ریکارڈ کی گئی ہے۔

سٹیٹ بینک آف پاکستان کی سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر جاری کردہ اعداد و شمار کے مطابق رواں ہفتے کے چوتھے کاروباری روز کے دوران انٹر بینک میں روپے کے مقابلے میں امریکی ڈالر 33 پیسے سستا ہو گی، قیمت 159 روپے 26 پیسے سے گر کر 158 روپے 93 پیسے ہو گئی ہے۔

معاشی ماہرین کا ڈالر کی قدر میں مسلسل کمی کے حوالے سے کہنا ہے کہ ملک بھر میں معاشی اعشاریے کے حوالے سے اچھی خبروں، مسلسل بڑھتے ہوئے ترسیلات زر اور آئی ایم ایف کی طرف سے پاکستان کے قرض پروگرام کی بحالی کی وجہ سے روپے پر سے امریکی ڈالر کے دباؤ میں کمی آنا شروع ہو گئی ہے اور روپیہ ڈالر کے مقابلے میں تگڑا ہوتا چلا جا رہا ہے۔


Featured Content⭐


24 گھنٹوں کے دوران 🔥


From Our Blogs in last 24 hours 🔥


>