علی سلمان علوی کی وجہ سے عاصمہ شیرازی پر تنقید کیوں؟

علی سلمان علوی کی وجہ سے عاصمہ شیرازی پر تنقید کیوں؟ ۔صدف کی موت سے ایک رات قبل صبح چار بجے تک ان کے گھر لڑائی ہوتی رہی، صدف میکے گئی تو گھر والوں نے دروازہ نہ کھولا۔۔۔ جانئے تفصیلات سید علی حیدر سے

اینکر سید علی حیدر نے تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ علی سلمان علوی بنیادی طور پر سافٹ وئیر انجینئر تھا لیکن یہ ٹوئٹر پر ایکٹیو رہتا تھا۔ عاصمہ شیرازی نے اسکا کام دیکھا کہ یہ بہت اچھا لکھتا ہے تو اسے 92 نیوز کے پروگرام میں اپنے ساتھ رکھ لیا۔

علی حیدر نے صدف کی بہن کے حوالے سے بتایا کہ یہ میں نہیں صدف کی بہن کہہ رہی ہے کہ صدف کو علی سلمان علوی سے محبت ہوگئی، دونوں شادی کرنا چاہتے تھے لیکن صدف کے گھر والے راضی نہ تھے، صدف نے گھر والوں کی مخالفت کے باوجود علی سلمان علوی سے شادی کرلی۔ شادی کے سات ماہ بعد صدف کو پتہ چلا کہ علی سلمان علوی لڑکیوں کو بلیک میل کرکے پیسے ٹھگتا ہے۔

علی حیدر کے مطابق صدف زہرہ کی بہن نے بتایا کہ صدف کو ایک خاتون نے پیسوں کی رسیدیں بھی بھجوائیں کہ کیسے علی حیدر نے اس سے پیسے نکلوائے، دونوں میاں بیوی کے درمیان اس پر تکرار ہوئی تو علی سلمان اپنی بیوی کے پیر پڑگیا کہ مجھے معاف کردو، آئندہ ایسا نہیں ہوگا، یہ میرا ماضی تھا۔ لیکن علی سلمان علوی وہی پرانے کام کرتا رہا اور اپنی بیوی پر آئے روز تشدد کرتا رہا۔

صدف کی بہن کا کہنا ہے کہ علی حیدر نے صدف سے جان چھڑانے کیلئے اسے مارا، اس پر تشدد کیا اور اسکی لاش پنکھے سے لٹکا کر خودکشی کا رنگ دینے کی کوشش کی۔

علی حیدر کا کہنا تھا کہ یہ تو صدف کی بہن کا کہنا تھا لیکن جو بات میں آپکو بتانے جارہا ہوں وہ سوشل میڈیا پر نہیں ملے گی۔ علی سلمان علوی کے محلے داروں نے بتایا کہ صدف کی موت سے ایک رات پہلے دونوں میاں بیوی کے درمیان لڑائی ہوئی اور صبح 4 بجے تک لڑائی ہوتی رہی۔علی سلمان علوی اپنی بیوی کو لیکر اپنے سسرال چلا گیا کہ اسکو رکھ لو لیکن انہوں نے دروازہ نہیں کھولا۔اسکے بعد علی سلمان اپنی بیوی کو لیکر واپس گھر آگیا۔

علی حیدر کے مطابق شام کو علی سلمان نے اپنے سسرال کال کی کہ میں برباد ہوگیا، میں لٹ گیا، صدف نے اپنے آپکو پھانسی لگادی۔وہ روتے ہوئے گھر پہنچے اور علی سلمان سے کہا کہ تم نے اسے مارا پیٹا ہے، اس وقت بھی صدف کے جسم پر تشدد کے نشانات تھے۔انہوں نے ایف آئی آر درج کروادی اور اسکے بعد علی سلمان علوی کو گرفتار کرلیا گیا۔

علی حیدر کا آخر میں کہنا تھا کہ علی سلمان علوی عاصمہ شیرازی کا پروڈیوسر ہے، وہ لوگ جو عاصمہ شیرازی کے مخالف ہیں، ان پر تنقید کرتے ہیں، انکو بھی موقع مل گیا ہے کہ وہ اسکا نزلہ عاصمہ شیرازی پر ڈالیں۔ہم ، آپ جتنا مرضی عاصمہ شیرازی کے پوائنٹ آف ویو کے مخالف ہوں لیکن علی سلمان علوی عاصمہ شیرازی کا پروڈیوسر تھا اور انکا تعلق عاصمہ شیرازی سے ورک پلیس کی حد تک تھا۔اس پوری چیز کا عاصمہ شیرازی سے کوئی تعلق نہیں ہے۔

  • Haqeeqat mai  tm log ganday dogly  log ho aik anchor ny  asma sherazi sy valid point pochy hai aur ab dosra bachany agya hai…tm anchors zada log ganday hamamo mai nahaty ho aur jb lagy k  is hamam k pani sy paleet hny lgy hai to jaan bachaty ho asma sherazi wo gandi aurat hai js k sath kaam krti rhi uski galat harkay krny. Pr us sy la taluq hogyi hai

  • Aur is ali haider anchor ko dekho apny anchor bhai ko bacha rha yai keh kr larki k maa baap ny uske liye darwaza ni khola  bharway us k miya ny us pr jasmani tashadaad kiya zehni abuse kiya   agr larki ny suicide b ki hai to  zimmedar ziada taar larka hai  js ny usy itna majboor kiya..


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >