کراچی: آوارہ کتے نے 2 سالہ ننھے بچے کو چہرے پر کاٹ لیا، آنکھ ضائع ہونے کا خدشہ

کراچی: آوارہ کتے نے 2 سالہ ننھے بچے کو کاٹ لیا، آنکھ ضائع ہونے کا خدشہ، والد کی مدد کی اپیل

کراچی: آوارہ کتے نے 2 سالہ ننھے بچے کو کاٹ لیا، آنکھ ضائع ہونے کا خدشہ

پاکستان کی معاشی حب کہلانے والے شہر کراچی میں سندھ حکومت کی نا اہلی کی وجہ سے آئے روز سگ گزیدگی کے واقعات سامنے آتے رہتے ہیں، جس کے زیادہ تر شکار کراچی کے ننھے بچے ہوتے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق کراچی کے علاقے گلزار کالونی میں آوارہ کتے نے دو سالہ ننھے بچے کو کاٹ لیا، بچے کو بچانے کے لیے آنے والے شخص کو بھی کتے نے کاٹ کر بری طرح سے زخمی کر دیا۔

دوسری جانب سگ گزیدگی کا شکار ہونے والے دو سالہ ننھے کلیم اللہ کے والد کا اپنے جاری کیے گئے ویڈیو پیغام میں کہنا تھا کہ آوارہ کتے کے کاٹنے کی وجہ سے میرے بچے کی آنکھ کا اگر بروقت علاج نہ کیا گیا تو وہ ضائع بھی ہو سکتی ہے۔

اپنے پیغام میں انہوں نے اپنے بچے کی آنکھ ضائع ہونے کا خدشہ ظاہر کرتے ہوئے سندھ حکومت سے مدد کی اپیل کرتے ہوئے کہا کہ کل دو بجے آوارہ کتے نے میرے بیٹے کو کاٹا تھا، میری اتنی توفیق نہیں ہے کہ میں اپنے بچے کی آنکھ کا علاج کروا سکوں۔

بچے کے والد نے مزید کہا کہ سندھ حکومت میرے بچے کی آنکھ کا علاج کروانے میں میری مدد کرے، اگر میرے بچے کی آنکھ علاج نہ ہونے کی وجہ سے ضائع ہو گئی تو اس کا ذمہ دار کون ہوگا؟


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >