کورونا وائرس: چین میں صرف 2 روز میں تیار ہونیوالا اسپتال کھل گیا

چین میں جان لیوا مرض کورونا وائرس کی روک تھام کیلئے ہنگامی بنیادوں پر اقدامات کا سلسلہ جاری ہے۔ اسپتالوں میں مریضوں کا رش لگا ہوا ہے،، متاثرہ افراد کی فوری طبی امداد کیلئے وہان کے قریب  ہزار بیڈ پر مشتمل  پہلا کورونا وائرس اسپتال  کھول دیا گیا۔

کورونا وائرس اسپتال مسلسل دو دن میں پانچ سو سے زائد مزدور اور متعدد بھاری مشینری کی مدد سے تیار کیا گیا ہے، جہاں  ہگانگ کے ڈیبی ماؤنٹین ریجنل میڈیکل سینٹر سے مریضوں کو منتقل کردیا گیا۔ مریضوں کو پانی، بجلی، انٹرنیٹ سمیت تمام سہولیات فراہم کی گئی ہیں۔۔۔ مزید دو اسپتال کا کام آئندہ ہفتے تک مکمل کر لیا جائے گا۔ ووہان کورونا وائرس کا گڑھ ہے جبکہ چین میں  سات ہزار سے زائد افراد متاثر ہیں۔۔اموات ایک سو ستر ہوچکی ہیں۔۔

چینی نیشنل ہیلتھ کمیشن  کا کہنا ہے کہ  آئندہ  دس دن میں مہلک وائرس سے متاثرہ افراد کی تعداد میں مزید اضافے کا خدشہ ہے۔یہ مہلک وائرس امریکا، جاپان، جرمنی، تھائی لینڈ،  سنگاپور، ویت نام، جنوبی کوریا اور سمیت سولہ ممالک کو لپیٹ میں لے چکا ہے۔ فن لینڈ میں بھی پہلا کیس سامنا آگیا ہے۔۔ دنیا بھر میں اکیانوے کیسز رپورٹ ہوچکے ہیں۔۔

وائرس سے بچاؤ کیلئے دنیا بھر میں  اقدامات مزید تیز کردیئے گئے۔۔ گوگل کمپنی نےچین میں عارضی طورپر اپنے تمام آفس بند کردئیے۔  کینیڈا  نے بھی اپنے شہریوں کو متاثرہ  علاقے سے نکالنے کا اعلان  کردیا۔۔  جاپان اور امریکا نے اپنے شہریوں کو وطن واپس بلالیا


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >