ایران نے کرونا وائرس کے پھیلنے کے خوف سے اپنی جیلوں سے 54 ہزار قیدیوں کو رہاکر دیا

تفصیلات کے مطابق ایران میں کرونا وائرس کی تباہ کاریاں تھمنے کا نام نہیں لے رہیں۔ وائرس کو مزید پھیلنے سے روکنے کے لیے ایران نے اقدام اٹھاتے ہوئے اپنی جیلوں میں قید 54 ہزار قیدیوں کو رہا کردیا۔ جبکہ دوسری جانب ایران میں اب تک 99 لوگ کرونا وائرس کا شکار ہوکر موت کے منہ میں جا چکے ہیں۔

چین کے بعد کرونا وائرس کے باعث سب سے زیادہ ہلاک ہونے والے افراد کی تعداد ایران سے آئی ہے۔ جبکہ ڈھائی ہزار سے زائد لوگ کورونا وائرس سے متاثر ہیں جن میں ایران کی پارلیمنٹ کے ارکان بھی شامل ہیں۔

جیل سے رہا ہونے والے قیدیوں کے حوالے سے ایرانی حکام کا کہنا تھا قیدیوں کو عارضی بنیادوں پر رہا کیا گیا ہے۔ جبکہ رہائی سے پہلے تمام قیدیوں کے کرونا وائرس کے ٹیسٹ کیے گئے اور ٹیسٹ منفی آنے پر قیدیوں کو جیل سے جانے دیا گیا۔ جبکہ پانچ سال سے زائد سزا پانے والے کسی قیدی کو رہا نہیں کیا گیا۔ ایرانی حکومت نے فوج طلب کر رکھی ہے جو لوگوں کو گھروں میں رہنے کی تلقین کر رہی ہے۔

گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران ملک بھر سے 835 نئے کیس سامنے آئے ہیں جن میں سے زیادہ تر کا تعلق دارالحکومت تہران ، قم اور غیلان کے صوبوں سے ہے۔ جبکہ 435 مریضوں کو کرونا وائرس کے علاج کے بعد ہسپتالوں سے گھر جانے کی اجازت دے دی گئی ہے۔

خیال رہے کہ دنیا بھر کے 76 ممالک میں 93 ہزار 160 افراد کورونا وائرس کا شکار ہیں۔جبکہ اموات کی تعداد 3203 تک پہنچ چکی ہے اور 50 ہزار سے زائد افراد صحب یاب بھی ہو چکے ہیں۔


Featured Content⭐


24 گھنٹوں کے دوران 🔥


From Our Blogs in last 24 hours 🔥


>