امریکہ : خاتون کے چھینکنے پر اسٹور مالک نے 56 لاکھ روپے کی غذائی اشیا تلف کردیں

کرونا وائرس کا خوف، خاتون کے کھانسنے پر سپر اسٹور نے 50 لاکھ کی کھانے اشیاء تلف کر دیں

خاتون اکثر محلے میں بھی لوگوں کو تنگ کرتی ہیں، امید ہے انہیں کرونا نہیں لیکن ہمارے پاس کوئی اور چارہ نہیں تھا۔ مالک

امریکا میں ایک بڑے سپر اسٹور میں خاتون کو کھانسنا مہنگا پڑ گیا، پھر خاتون کے ساتھ کیا ہوا؟ ویڈیو دیکھیں

امریکا میں ایک بڑے سپر اسٹور میں خاتون کو کھانسنا مہنگا پڑ گیا، پھر خاتون کے ساتھ کیا ہوا؟ ویڈیو دیکھیں

Posted by DawnNews on Friday, March 27, 2020

تفصیلات کے مطابق امریکا میں ایک بڑے سپر اسٹور پر ایک خاتون کے کھانسنے پر انتظامیہ نے 35000 ڈالر کی غذا تلف کردی جس کی مالیت 50 لاکھ پاکستانی روپے سے زائد ہے۔

پینسلوانیا میں جیریٹی سپراسٹور کے مالک جو فیسولہ نے بتایا کہ ایک خاتون نے باری باری پہلے تازہ غذاؤں، بیکری مصنوعات اور اس کے بعد گوشت پر کھانسا جس کے بعد کھانے کی بڑی مقدار کو تلف کیا گیا جس کی قیمت ہزاروں ڈالرہے۔

اس خاتون کے بارے میں کہا جاتا ہے کہ وہ اپنے محلے میں بھی لوگوں کو پریشان کرتی رہتی ہیں۔ اسٹور کے مطابق خاتون نے مذاق میں جان بوجھ کر یہ عمل کیا لیکن انتظامیہ کے مطابق اس کے بعد ان کے پاس کوئی چارہ نہیں کہ تمام مشکوک سامان کو پھینک دیا جائے۔
سپر اسٹور کی انتظامیہ نے کہا ہے کہ انہیں یقین ہے کہ خاتون کورونا وائرس سے متاثر نہیں ہوں گی لیکن یہ عمل حفاظت کے طور پر انجام دیا گیا ہے۔ اس سارے سامان کو پھینکنے کے لیے 15 ملازمین نے حصہ لیا ہے۔

یہ واقعہ ہینوور میں پیش آیا ہے جہاں پولیس افسران نے خاتون پر مقدمہ درج کرلیا ہے جس میں ’شعوری طور پر غذائی اشیا اور گوشت کو آلودہ ‘ کیا گیا ہے۔ اس کے بعد خاتون کی دماغی صحت کا جائزہ بھی لیا گیا ہے۔

یاد رہے کہ امریکا کرونا مریضوں کے لحاظ سے چین کو بھی پیچھے چھوڑ گیا ہے۔ نیو یارک میں مریضوں کے لئے وینٹیلیٹرز کم پڑ گئے ہیں۔

OR comment as anonymous below

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے


24 گھنٹوں کے دوران 🔥

View More

From Our Blogs in last 24 hours 🔥

View More