لیبیا: ترکی کے فضائی اڈے پر جنگی طیاروں کی بمباری، ایئر ڈیفنس سسٹم تباہ

غیر ملکی خبر رساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق لیبیا کے الوطیہ کے ہوائی اڈے پر اچانک نامعلوم جنگی طیاروں کی جانب سے بمباری شروع کر دی گئی، نامعلوم جنگی طیاروں کی جانب سے کی گئی بمباری کی وجہ سے ایئرپورٹ کا ایئر ڈیفنس سسٹم مکمل طور پر تباہ ہوگیا ۔

جس فوجی اڈے پر نامعلوم جنگی طیاروں کی جانب سے بمباری کی گئی ہے اس کا قبضہ اقوام متحدہ کی تسلیم شدہ لیبیا کی حکومت نے ترک فوج کی مدد سے واگزار کروایا تھا، واگزار کروانے کے بعد ترک فوج اس اڈے کو استعمال کر رہی تھی۔

دوسری جانب اقوام متحدہ کی تسلیم شدہ حکومت کے مخالف لیبنیئن نیشنل آرمی کے کمانڈر حفتر نے خود کو بری الذمہ قرار دیتے ہوئے میڈیا کو بتایا کہ فوجی اڈے پر حملہ نامعلوم جنگی طیاروں نے کیا ہے ان کا اس حملے میں کوئی ہاتھ نہیں ہے، تاہم اس عمل کی ذمہ داری حاطر اور اس کی عسکری فوج پر ہی ڈالی جا رہی ہے۔

فضائی حملہ کے بارے میں ترک کی فوج کی جانب سے کوئی تبصرہ سامنے نہیں آیا، تاہم حملے کی تصدیق اقوام متحدہ کی تسلیم شدہ لیبیا کی حکومت کے فوجی ترجمان نے کی ہے، دوسری جانب علی کا مکینوں کا خبر رساں ادارے کو بتاتے ہوئے کہنا تھا کہ انہیں رات بھر دماکو کی آواز سنائی دیتی رہی، جس کی وجہ سے ہمارے بچوں میں خوف و ہراس پھیلا ہوا ہے۔

  • مجھے دکھ کے ساتھ کہنا پڑھ رہا ہے کہ عالمی جنگ کے ساے گہرے ہورہے ہیں ایک سال کا راشن پانی احتیاطا اپنے اپنے گھروں میں سٹور کرلیں، ایران اسرائیل جنگ بھی تقریبا شروع ہے چین پاکستان اور انڈیا بھی جنگ کرنے جارہے ہیں اور امریکہ کی وجہ سے روس یہاں بھی ملوث ہوگیا تو پھر عالمی جنگ کو روکنا ناممکن ہوگا


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >