نریندر مودی کا سایہ، شادی کی تیاریوں میں مصروف بھارتی جوڑے کو لے ڈوبا

بھارتی ریاست اتر پردیش میں شادی کی تیاریوں میں مصروف جوڑا ایک مندر میں ملاقات کے دوران شادی کے اخراجات کی تقسیم پر مشاورت کررہا تھا۔

اسی دوران دولہا دلہن ملکی معاشی صورتحال پر بات کرنے لگے جس پر دولہن جو کہ سرکاری ملازم تھی اس نے بھارتی وزیراعظم نریندر مودی کو موجودہ حالات کا ذمہ دار ٹھہرایا۔جب کہ دولہا جو کہ بزنس مین تھا وہ نریندر مودی کا حامی تھا اس نے دولہن کے خیالات سے اختلاف کرتے ہوئے شادی توڑنے کا اعلان کر دیا۔

تفصیلات کے مطابق دولہن موجودہ بھارتی حالات کا ذمہ دار نریندر مودی کی غلط معاشی پالیسیوں کو سمجھتی تھی جبکہ دولہا اس سے برعکس سوچتا تھا دولہا بی جے پی کا حامی اور نریندر مودی کا فین تھا۔جس کی وجہ سے بحث مباحثہ تکرار میں بدلتا بدلتا لڑائی تک پہنچ گیا جس کے بعد شادی کا بندھن بنتا بنتا ختم ہو گیا۔

بھارت میں اس سے پہلے بھی ایسے واقعیات سامنے آ چکے ہیں


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >