کویت اور بھارت کے درمیان سوشل میڈیا کا گھمسان، وجہ کیا ہے؟ تفصیلات جانیے

ایک مہینہ قبل کویت کی حکومت نے قانون بنایا جس کے تحت 15 فیصد سے زائد بھارتیوں کو کویت میں رہنے یا کام کرنے کی اجازت نہیں دی جائے گی۔

اس خبر کے بعد بھارتی ہندوتوا کے حامی اور آر ایس ایس کے نظریے کے پیروکاروں نے اس پر ہندو مسلمان کا کارڈ کھیلنا شروع کر دیا اور یوں ظاہر کیا جیسے کویت نے کہا ہو کہ 15 فیصد سے زائد ہندوؤں کو کویت میں نہیں رہنے دیا جائے گا۔

اس کے بعد بھارتی خبر رساں ادارے نے خبر دی کہ اگر یہ قانون پاس ہو جاتا ہے تو 8 لاکھ بھارتیوں کو کویت سے واپس بھارت آنا پڑ سکتا ہے۔

اس خبر پر ردعمل دیتے ہوئے بی جے پی کے رہنما سوامی سبرامنیم نے ٹوئٹر پر ٹویٹ کی کہ "کویتی حکومت نمک حرام ہے”، انہوں 1991 کا ایک واقعہ یاد دلایا جب صدام حسین کی عراق پر محاذ آرائی کے نتیجے میں انہوں نے چندرشیکھر کی حکومت کے دوران بھارت میں امریکی ایئر فورس سے بات چیت کی تھی۔ جس کا بہرحال کویت کو فائدہ پہنچا تھا۔

بی جے پی رہنما سوامی سبرامنیم کے اس ٹویٹ کے جواب میں کویتی سوشل ایکٹویسٹ المحامی مجبل الشریکہ نے جواب دیا کہ بھارت کی ہندوتوا نظریے کی حامی حکومت کویت سے اربوں ڈالر ہڑپنے بھائی چارہ اور اچھے برتاؤ کے بعد کویت کو نمک حرام کہہ رہی ہے۔

انہوں نے مزید لکھا کہ پہلے بی جے پی کے ممبر آف پارلیمنٹ تیجسوی سوریا نے ہماری خواتین سے متعلق غلیظ زبان استعمال کی تھی اور اب ایک اور سبرامنیم سوامی ہمیں نمک حرام کہہ رہا ہے جس کا جواب لازمی دیا جائے گا۔

ان ٹویٹس کے بعد بھارتی اور کویت دونوں جانب سے سوشل میڈیا پر ایک لڑائی کا سماں ہے جس میں دونوں جانب سے برابر برا بھلا کہا جا رہا ہے مگر اب یہ دیکھنا ہو گا کہ اس کے بعد کویتی حکومت اس عمل پر کیا ردعمل دیتی ہے۔

  • gulf states should learn lesson now that non muslims can never be their friends……Only a single step can bring Moodi down on his knees & Kashmir will be free if Gulf states announce to deport all Indians from Gulf states . India receives 31% of its foreign remittances from Gulf states & this single announcement will change the history of world.

  • مجھے نہیں پتا کے کویت نے یہ فیصلہ کیوں لیا لیکن انسانیت کے ناطے سوچا جائے تو یہ فیصلہ غلط ہے کیوں کے لاکھوں لوگ بے روزگار ہوں گے جن کا برائے راست فرق ان کی فیملیز پر پڑے گا ..


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >