ٹرمپ کا ٹک ٹاک اور وی چیٹ پر پابندی کا اعلان

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے اعلان کیا ہے کہ ملک بھر میں چینی موبائل ایپلی کیشن ٹک ٹاک اور وی چیٹ پر پابندی عائد کی جارہی ہے۔

تفصیلات کے مطابق امریکہ اور چین کے درمیان جاری سرد مہری کے نتیجے میں امریکی صدر نے چینی موبائل ایپلی کیشن کے خلاف بڑا فیصلہ کرلیا ہے،ڈو نلڈ ٹرمپ نے 7 اگست کو ٹویٹر پر جاری اپنے پیغام میں تمام امریکی کمپنیوں کو ٹک ٹاک اور وی چیٹ کی کمپنیوں کے ساتھ ہر قسم کے لین دین کو 45 روز میں ختم کرنے کا اعلان کیا تھا۔

جس کے بعد اب انہوں نے ٹک ٹاک کو 20 ستمبر جبکہ وی چیٹ کو 21 نومبر کو بند کرنے کا اعلان کیا ہے۔

امریکی صدر نے الزام عائد کیا تھا کہ یہ ویڈیو ایپلی کیشنز اہم امریکی شخصیات اور صارفین کا ڈیٹا چرا کر چین کو فراہم کرتی ہیں۔

چینی حکومت نے ٹرمپ کے اس الزام کو بے بنیاد قرار دیتے ہوئے کہا تھا کہ ٹرمپ چینی کمپنیوں کو ہراساں کررہے ہیں، ہم کسی قسم کے دباؤ میں نہیں آئیں گے ، چینی ایپلی کیشنز کے خلاف امریکی اقدامات آزاد تجارت کے خلاف اور امتیازی سلوک ہے جو کہ ورلڈ ٹریڈ آرگنائزیشن کے قوانین کے بھی خلاف ہے۔

یاد رہے کہ چین اور بھارت کے درمیان سرحدی علاقوں میں ہونے والی جھڑپوں کے بعد بھارتی حکومت نے بھی ملک میں چینی موبائل ایپلیکیشنز پر پابندی عائد کردی تھی، اب امریکہ میں اس پابندی کے بعد چینی کمپنیوں کو شدید نقصان کا خطرہ ہے۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >