مودی کی انتقامی کارروائیاں،ایمنسٹی انٹرنیشنل نے بھارت میں کام روک دیا

مودی سرکار کی انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں پر نظر رکھنے والے ادارے ایمنسٹی انٹرنیشنل کیخلاف ورزیاں جاری ہیں، مودی کی انتقامی کارروائیوں اور سرگرمیوں سے تنگ آکر ایمنسٹی انٹرنشیل نے بھارت میں کام روک دیا ہے۔

ایمنسٹی کے مطابق حکومت کی جانب سے "انتقامی کارروائی” کی وجہ سے وہ بھارت میں اپنی کارروائیوں کو روکنے پر مجبور ہوگیا ہے۔ حکومت نے ان کے بینک کھاتوں کو منجمد کر دیا ہےم بینک اکاؤنٹس منجمد ہونے سے انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کا تحقیقاتی کام رک گیا، عملے کو چھوڑنے اور اس کی ساری مہم اور تحقیقی کام معطل کرنے پر مجبور کردیا ہے۔

گروپ کے سینئر ڈائریکٹر ریسرچ ، ایڈوکیسی اور پالیسی نے بتایا ، "ہمیں بھارت میں ایک غیرمعمولی صورتحال کا سامنا ہے۔ ایمنسٹی انٹرنیشنل انڈیا کو انتہائی منظم انداز میں حکومت کی طرف سے حملوں ، دھونس اور ہراسانی کا سامنا کرنا پڑا رہا ہے، حکومت ہمارے سوالات کا جواب نہیں دے رہی چاہے وہ دہلی فسادات سے متعلق ہوں یا کشمیر کی آوازوں کو خاموش کرنے سے متعلق ہوں۔

ایمنسٹی انٹرنیشنل کا کہنا تھا کہ مودی حکومت انسانی حکومت کی تنظیموں کو نشانہ بنا رہی ہے، پابندیوں کا مقصد مقبوضہ کشمیر اور دہلی فسادات پر آواز کو روکنا ہے۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >