ترک اسمبلی نے فرانسیسی صدر کو ملعون قراردیدیا

ترکی کی قومی اسمبلی میں فرانسیسی صدر ایمانوئیل میکرون کو ملعون قراردینے کا میمورینڈم منظور کرلیا گیا ہے۔

ترک میڈیا کے مطابق قومی اسمبلی کی جنرل کمیٹی نے میمورینڈم کی منظوری دی جس کے مطابق اسلام مخالف بیانات دینے کی وجہ سے فرانسیسی صدر کو ملعون قراردیا جاتا ہے۔

میمورینڈم میں کہا گیا ہے کہ فرانسیسی صدر ایمانوئیل میکرون کی جانب سے اسلام، مسلمانوں کے آخری نبی محمد صل اللہ علیہ و آلہ و سلم اور مسلمانوں کے خلاف اشتعال انگیز بیانات اور گستاخانہ خاکوں پر لعنت بھیجتے ہیں، اور اقوام عالم سے اپیل کرتے ہیں کہ وہ اپنے رویوں پر نظر ثانی کریں اور عقل سے کام لیں۔

دوسری جانب پاکستانی وزیراعظم نے بھی گستاخانہ خاکوں کے خلاف موثر کردار ادا کرتے ہوئے اسلامک ممالک کے سربراہان کو خط لکھ کر توہین رسالت صل اللہ علیہ و آلہ و سلم اور اسلاموفوبیا پر متحد ہونے کی اپیل کردی ہے، تاکہ دنیا کو واضح پیغام دیا جاسکے، اور مغربی ممالک کو بتایا جائے کہ نبی پاک صل اللہ علیہ و آلہ وسلم کی ذات ہمارے لیے کتنی مقدس ہے۔

عمران خان نے اپنے خط میں لکھا جیسے یہودی ہولوکاسٹ پر تنقید سے متعلق بنائی گئی پابندی پرعمل کرتے ہیں اسی طرح انہیں مسلمانوں کے عقائد کا احترام کرنا چاہئے، قرآن پاک کو شہید کیا جانا اور گستاخانہ خاکوں جیسے واقعات اسلاموفوبیا ظاہر کرتا ہے۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >