بھارت:دیسی کووڈ ویکسین لگوانے والا ریاستی وزیر صحت کورونا وائرس کا شکار

گزشتہ سال کے آخر میں چین کے شہر ووہان سے شروع ہونے والی کرونا وائرس نامی وباء سے نمٹنے اور اس کی ویکسین بنانے کے لیے پوری دنیا کی میڈیکل کمپنیاں اس وقت دن رات ایک کر کے پوری جدوجہد کے ساتھ کرونا وائرس کی ویکسین بنانے کے لیے کوشاں ہے، جبکہ کچھ دوا ساز کمپنیاں اپنی کرونا وائرس سے بچاؤ کی ویکسین کے آخری مرحلے میں پہنچ گئی ہیں۔

پوری دنیا کی طرح بھارتی دوا ساز کمپنیاں بھی کرونا وائرس سے بچاؤ کی ویکسین تیار کرنے میں مصروف ہیں، تاہم بھارت بائیوٹیک ، آئی سی ایم آر کے ساتھ مل کر "کوویکسن” کے نام سے کورونا ویکسین تیار کرنے کی کوشش کر رہا ہے اور اس کے کلینیکل ٹرائیل تیسرے اور اہم مرحلہ میں داخل ہو گئے ہیں۔

بھارتی میڈیا کی رپورٹس کے مطابق مقامی سطح پر تیار کی گئی کرونا ویکسین کے تیسرے مرحلے میں بھارت کی ریاست ہریانہ کے وزیر داخلہ نے کرونا وائرس سے بچاؤ کی ویکسین کا ٹیکا لگایا تھا، تاہم کرونا وائرس سے بچاؤ کی ویکسین کا ٹیکا لگانے سے چند روز بعد ہی وہ کرونا وائرس کا شکار ہو گئے۔

بھارتی ریاستی وزیر داخلہ کا کرونا وائرس میں مبتلا ہونے کی تصدیق کرتے ہوئے  ٹوئٹر پر کہنا تھا کہ انہیں کرونا وائرس سے ہو گیا ہے اور جو لوگ بھی گزشتہ کچھ دنوں سے مجھ سے رابطے میں تھے وہ اپنا کرونا وائرس کا ٹیسٹ ضرور کروائیں۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >