نو منتخب امریکی صدر جوبائیڈن واشنگٹن روانہ ہونے سے قبل جذباتی خطاب میں رو پڑے

نو منتخب امریکی صدر کا ڈیلاویئر سے واشنگٹن روانہ ہونے سے قبل جذباتی خطاب، بیٹے کا ذکر کرتے ہوئے رو پڑے

غیر ملکی میڈیا کی رپورٹ کے مطابق دنیا کی سپر پاور امریکہ کے نو منتخب ہونے والے 46 ویں صدر جوبائیڈن نے ریاست ڈیلاویئر سے واشنگٹن ڈی سی روانہ ہونے سے قبل ایک جذباتی خطاب کیا۔

نو منتخب امریکی صدر جو بائیڈن اپنے جذباتی خطاب میں ریاست ڈیلاویئر میں گزاری اپنی زندگی کے لمحات اور اپنے بیٹے کو یاد کر کے جذبات پر قابو نہ رکھ سکے اور خطاب کے دوران ان کی آنکھوں سے آنسو بہہ گئے۔

نو منتخب امریکی صدر جوبائیڈن واشنگٹن روانہ ہونے سے قبل خطاب میں آبدیدہ ہو گئے

نو منتخب امریکی صدر جو بائیڈن کا اپنے بیٹے بو بائیڈن کو یاد کرتے ہوئے اپنے خطاب میں کہنا تھا کہ مجھے آج بس ہے اسی بات کا دکھ ہے کہ میرا بیٹا بو بائیڈن آج ہمارے درمیان موجود نہیں ہے، اگر وہ آج یہاں ہوتا تو ہم اسے صدر کے طور پر متعارف کرواتے۔

نو منتخب امریکی صدر جوبائیڈن واشنگٹن روانہ ہونے سے قبل خطاب میں آبدیدہ ہو گئے

واضح رہے کہ امریکا کے 45 ویں صدر ڈونلڈ ٹرمپ اپنی صدارتی مدت پوری کرنے کے بعد وائٹ ہاؤس سے رخصت ہو گئے ہیں اور نومنتخب صدر جوبائیڈن آج اپنے عہدے کا حلف اٹھائیں گے جو اگلے 4 سال مدت کے لیے صدر منتخب ہو کر وائٹ ہاؤس منتقل ہو جائیں گے۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق امریکہ کی روایت کے مطابق امریکہ کا سبکدوش ہونے والا صدر نو منتخب صدر کی حلف برداری کی تقریب میں شرکت کرتا ہے، تاہم ڈونلڈ ٹرمپ اس روایت کو توڑتے ہوئے نو منتخب صدر جو بائیڈن کی حلف برداری کی تقریب میں شرکت نہیں کریں گے۔

 


Featured Content⭐


24 گھنٹوں کے دوران 🔥


From Our Blogs in last 24 hours 🔥


>