رخصتی کے وقت زیادہ رونے سے دلہن کی موت،شہنائیوں کی جگہ صف ماتم بچھ گئی

بھارتی ریاست اوڈیشا میں کے ضلع سون پور میں گپتسواری ساہو عرف روزی نامی خاتون کی شادی تیتل گاؤں کے ایک شخص کے ساتھ ہو رہی تھی کہ رسومات کے دوران دلہن اس قدر روئی کے اسے دل کا دورہ پڑ گیا۔ روزی ہو ہسپتال لیجایا گیا تو ڈاکٹروں نے مردہ قرار دے دیا۔

تفصیلات کے مطابق گپتسواری ساہو عرف روزی کی ضلع بالاگیر میں تیتل گاؤں کے بسی کیسان نامی شخص سے شادی ہو رہی تھی دیگر رسومات ادا ہونے کے بعد جب رخصتی کا وقت آیا تو روزی نے زاروقطار رونا شروع کیا اور روتے روتے بےہوش ہو کر گر پڑی۔

دلہن کے اہلخانہ اور رشتے داروں نے منہ پر پانی چھڑک کر اور مختلف تدبیروں سے اسے ہوش میں لانے کی کوشش کی لیکن وہ بے سدھ پڑی رہی جب ہوش میں لانے کی تمام کوششیں ناکام ہوگئیں تو روزی کو فوری طور پر ہسپتال لیجایا گیا جہاں ڈاکٹر نے بتایا کہ وہ کچھ دیر پہلے دل کے دورے کے باعث ہلاک ہو گئی ہے۔

ڈاکٹر نے بتایا کہ گپتسواری اس شدت سے روئی تھی کہ اسے کارڈیک اریسٹ ہوا جس کے باعث وہ مر گئی۔ روزی کے اہلخانہ کا کہنا تھا کہ وہ بالکل صحتمند تھی اور اسے دل کی بیماری جیسا کوئی مسئلہ نہیں تھا۔

دوسری جانب اس گاؤں کے لوگوں کا کہنا ہے کہ کچھ عرصہ قبل روزی کے والد کی موت ہوئی تھی جس کی وجہ سے وہ کافی دکھ اور غم کی حالت میں تھی شاید اسی وجہ سے باپ کی کمی کو محسوس کرتے ہوئے اس کی موت ہو گئی۔


Featured Content⭐


24 گھنٹوں کے دوران 🔥


From Our Blogs in last 24 hours 🔥


>