عالمی بینک و آئی ایم ایف کا غریب ملکوں کے قرضے معاف کرنےکا عندیہ

عالمی بینک و آئی ایم ایف کا غریب ملکوں کے قرضے معاف کرنے کیلئے شرط رکھ دی

ورلڈ بینک اور بین الاقوامی مانیٹری فنڈ(آئی ایم ایف) نے دنیا کے غریب ممالک کے قرضوں میں گرین پراجیکٹس کے بدلے میں چھوٹ دینے کا عندیہ دیا ہے۔

خبررساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق آئی ایم ایف اور عالمی بینک کےاجلاسوں میں فیصلہ ہوا ہے کہ غریب ممالک کے قرضے ماحول دوست منصوبوں کے بدلے میں معاف کردیئے جائیں گے۔

اس حوالے سے ورلڈ بنک کے ترجمان کا کہنا تھا کہ کورونا وائرس کے عالمی بحران کے دوران غریب ممالک معاشی و ماحولیاتی مسائل کا شکار ہوگئے ہیں، ایسے حالات میں غریب ممالک کو اپنی معیشت کو سہارا دینے کیلئے ہنگامی امداد استعمال کرنی پڑی ہے۔

دوسری جانب آئی ایم ایف کے منیجنگ ڈائریکٹر کرسٹالین جارجیوا نے کہا کہ سبز قرضوں کے تبادلے کا خیال سمجھ میں آتا ہے۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق اس فیصلے کا باقاعدہ اعلان کب تک متوقع یہ ہے یہ ابھی کہنا قبل از وقت ہوگا تاہم اس حوالے سے سفارشات اور تجاویز اسکاٹ لینڈ کے شہر گلاسکو میں آئندہ سی اوپی کے 26ویں اجلاس کے دوران پیش کی جائیں گی۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >