بھارتی نژاد صحافی نے مودی حکومت کی حقیقت کھول کر رکھ دی

بھارتی نژاد صحافی نے مودی حکومت کی حقیقت کھول کر رکھ دی

بھارتی نژاد امریکی صحافی و مصنف فرید زکریا نے بھارت میں میڈیا کی آزادی اور حکومت کی جانب سے کورونا وائرس پر قابو پانے کیلئے اٹھائے گئے اقدامات کی حقیقت کھول کر رکھ دی ہے۔

امریکی نشریاتی ادارے سی این این کے ایک پروگرام سے گفتگو کرتے ہوئے فرید زکریا کا کہنا تھا کہ مجھے افسوس کے ساتھ کہنا پڑرہا ہے کہ بھارت میں آزاد میڈیا جو پہلے کبھی ہوتا تھا اب نہیں رہا ہے۔

بھارت میں حکومت کی ناقص پالیسیوں کے نتیجے میں تیزی سے پھیلنے والے کورونا وائرس کے ذمہ داروں کے تعین سے متعلق سوال کے جواب میں فرید زکریا کا کہنا تھا کہ جب میڈیا غلام بن کر حکومت کی کامیابیوں پر ڈھول پیٹنے لگے تو حکومت پر کسی بھی قسم کا دباؤ نہیں رہتا ، مودی حکومت پر بھی کسی قسم کا دباؤ نہیں ہے جو وہ کورونا وائرس کے حوالے سے کسی پر ذمہ داری عائد کریں ۔

انہوں نے مزید کہا کہ مودی کی حکمرانی میں بھارتی میڈیا تباہ ہوچکا ہے، زیادہ تر مقامی میڈیا چینلز وزیراعظم مودی کیلئے چیئر لیڈرز کی طرح کام کررہے ہیں اور جو چند ایک ادارے اس ڈگر پر نہیں چل رہے انہیں ٹیکس اور دیگر طریقوں سے حکومت کی جانب سے انتقام کا نشانہ بنایا جارہا ہے۔

مودی حکومت آزاد میڈیا کی غیر موجودگی میں خود کو مضبوط کرنے اور مزید طاقت حاصل کرنے کے اقدامات اٹھا رہی ہے جس میں آگے چل پر پھر سے میڈیا کی آزادی کو مزید سلب کیا جائے گا، اب حکومت ٹویٹر اکاؤنٹس بلاک کروارہی ہے ٹویٹس ڈیلیٹ کروادیتی ہے اور ایسا ہی فیس بک کے ساتھ ہورہا ہے تو بھارت میں آزادی اظہار رائے ختم ہوکر رہ چکی ہے۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >