کورونا سےمتاثر بھارتی ریاست اتراکھنڈ میں بادل پھٹنے سے شدید بارش،کروڑوں کا نقصان

کورونا سےمتاثر بھارتی ریاست اتراکھنڈ میں بادل پھٹنے سے شدید بارش،کروڑوں کا نقصان

بھارتی ریاست اترا کھنڈ میں چند منٹوں میں ہونے والی شدید بارش نے سیلابی صورتحال پیدا کردی جس سے علاقے میں درجن بھر دکانیں تباہ ہوگئی ہیں۔

بھارتی میڈیا رپورٹس کے مطابق اتراکھنڈ کے علاقے دیو پریاگ میں بادل پھٹنے کا واقعہ پیش آیا جس کے سبب انتہائی تیز بارش ہوئی، بارش کے باعث علاقے کی شانتی ندی میں سیلابی صورتحال پیدا ہوگئی ۔

ندی میں پیدا ہونے والی طغیانی نے متصل شانتی بازارکو اپنی لپیٹ میں لے لیا جس کی وجہ سے علاقے میں کئی عمارتیں بشمول آئی ٹی ٹاور زمین پر آگئیں اور 12 کےقریب دکانیں بہہ گئیں۔

پولیس کے مطابق واقعے میں علاقے کا ایک پل بھی بہہ گیا ہے، ابتدائی اندازے کے مطابق کروڑوں کے نقصان کا امکان ہے تاہم کسی جانی نقصان کی اطلاعات نہیں ملی ہیں۔

واضح ہو کہ ایسی بارش جس کیلئے عام اصطلاح "بادل پھٹنا” استعمال کی جائے اس کامطلب یہ ہوتا ہے کہ بہت قلیل وقت میں شدید یعنی ایک انچ تک بارش پڑجائے اور ساتھ میں گرج چمک کے ساتھ اولے بھی گرنے لگیں۔

ایسا صورتحال پیش آنے کی وجہ تکنیکی ہوتی ہے جس کے مطابق گرم ہوا جب بادلوں کے نچلے حصے سے ٹکرا کر بارش کو روک دے تو بادلوں کے اندر موجود بخارات بہت تیزی سےپانی میں تبدیل ہونے لگتے ہیں اورجیسے ہی گرم ہوا ختم ہوتی ہے اور بادلوں کے نیچے ہوا کا درجہ حرارت ٹھنڈا ہونے لگتا ہے تو بادل اپنے اندر موجود پانی اور روک نہیں پاتا اور پھٹ جاتا ہے جس کے نتیجے میں شدید تیز بارش ہوتی ہے جیسا اترا کھنڈ میں دیکھا گیا۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >