اسرائیلی سافٹ ویئر کے ذریعے 50 ہزار سے زائد افراد کی جاسوسی کا انکشاف

امریکی اخبار واشنگٹن پوسٹ ، برطانوی اخبار گارڈین اور دیگر خبر رساں اداروں کا اسرائیلی کمپنی کے پیگاسس نامی سافٹ وئیر سےدنیا بھر میں پچاس ہزار سے زائد افراد کی جاسوسی کا انکشاف

عالمی خبررساں اداروں کی رپورٹ میں بتایا گیا کہ اسرائیلی کمپنی کا تیارہ کردہ پیگاسوس نامی سافٹ ویئر ایسا میل ویئر ہے جو آئی فونز اور اینڈرائیڈ آلات کو متاثر کرتا ہے، اس کے ذریعے میسیجز، فوٹوز، ای میلز،فون کالز اور مائیکرو فون کو خفیہ طور پر ہیک کیا جاتا ہے۔

یہ سافٹ ویئر موبائل فونز کو ہیک کرنے کے لیے وائرس کی طرح کام کرتاہے صرف موبائل ایک میٹر کے فاصلے تک رکھنے کی دیر ہے یہ سافٹ ویئر خود بخود موبائل فون میں داخل ہوجاتا ہے۔ موبائل فون آپریٹنگ سسٹم کی خرابیوں سے فائدہ اٹھاتے ہوئے پیگاسس موبائل فون میں داخل ہوجاتا ہے اور صارف یا آپریٹنگ سسٹم چلانے والی کمپنی کو کسی چیز کا احساس دلائے بغیر موبائل کے ہرطرح کے ڈیٹا تک رسائی حاصل کر لیتا ہے۔

رپورٹ میں انکشاف کیا گیا کہ اسرائیلی سافٹ ویئر کے زریعے دنیابھر میں انسانی حقوق کے وکلا ، کارکن کے فونز ہیک کئےگئے، جاسوسی کے شکار افراد میں فنانشل ٹائمز کی ایڈیٹر سمیت 180صحافی بھی شامل ہیں، فنانشل ٹائمز کی ایڈیٹر رولا خلف 2018 میں جاسوسی نیٹ ورک کا ہدف رہیں۔

برطاوی اخبار گارڈین نے مودی سرکار سے متعلق بھی بھانڈا پھوڑ دیا ہے کہ وہ کیسے مخالفین اور صحافیوں کیخلاف اسرائیلی ہیکنگ سافٹ ویئر استعمال کرتے رہے اور اپنے مخالفین پر مقدمات بنواتےکو جیل میں ڈلواتے رہے ۔

برطانوی اخبار نے انکشاف کیا کہ اسرائیلی ہیکنگ سافٹ ویئر کی مدد سے مودی سرکار نے مخالفین کا ڈیٹا ہیک کیا جس میں صحافی، سیاستدان، اداکار، سماجی رہنما شامل تھے۔

مودی سرکار نے عمر خالد نامی سماجی کارکن اور سٹوڈنٹ لیڈر کا فون ہیک کرایا اور اس پر بغاوت کا کیس بناکر اسے جیل میں ڈلوایا۔ علاوہ ازیں علاوہ مودی سرکار نے نچلی ذات کیلئےآواز اٹھانیوالے صحافیوں، دانشوروں، وکلا اور اداکاروں کے فونز ہیک کرائے اور اپنے کئی مخالفین کو جیل میں ڈلوایا

اسرائیلی کمپنی نے بڑے پیمانے پر عرب سیاست دانوں، کاروباری حضرات اور سربراہان مملکت کو اپنا ترجیحی ہدف مقرر کرتے ہوئے ان کے موبائل فونز تک رسائی حاصل کی اور اس کے ہر جائز ناجائز ذریعہ استعمال کیا گیا۔

علاوہ ازیں دو ہزار انیس میں آذربائیجان کی خاتون سماجی کارکن کی تصاویر بھی ہیک کی گئیں، یہ انکشاف بھی کیا گیا کہ قتل کئےجانیوالےصحافی جمال خشوگی کی بیوی کا فون بھی ہیک کیاگیا،۔

دوسری جانب پیگاسس سافٹ ویئر بنانے والی کمپنی نے کلائنٹس کی سرگرمیوں کےبارے میں دعوؤں کو مستردکردیا، پیگاسس سافٹ ویئر کےغلط استعمال کے تمام معتبر دعوؤں کی تحقیقات اور کارروائی کی جائےگی۔


Featured Content⭐


24 گھنٹوں کے دوران 🔥


From Our Blogs in last 24 hours 🔥


>