کیا طالبان 11 ستمبر کو افغانستان میں نئی حکومت کا اعلان کرنے جارہے ہیں؟

کابل : امارت اسلامیہ نے افغانستان میں نئی حکومت کے قیام کی تاریخ کا اعلان کردیا جبکہ افغان طالبان نے اپنی فتوحات کی تاریخیں بھی شیئر کردیں۔

غیر ملکی میڈیا کے مطابق افغان طالبان نے افغانستان کا مکمل کنٹرول حاصل کرنے کے بعد نئی حکومت کے قیام کی تاریخ کا اعلان کیا ہے،طالبان نے اعلان کیا کہ 11 ستمبر کو نئی حکومت کا قیام عمل میں آئے گا جو پنجشیر کی فتح تک ملتوی کردیا گیا تھا۔

امارت اسلامیہ اپنے ٹوئٹ میں فتح کی تاریخیں بھی شیئر کی جس کے مطابق 15 اگست کابل اور 6 ستمبر کو وادی پنجشیر فتح ہوئی۔

گیارہ ستمبر کا دن دنیا بھر میں انتہائی اہمیت کا حامل ہے اورطالبان کا اس دن اپنی حکومت کا اعلان خاصا معنی خیز ہے۔ اس دن امریکہ کے ورلڈٹریڈ سنٹر پر دہشتگردانہ حملے ہوئے تھے جس کے بعد امریکہ نے افغانستان پر چڑھائی کردی تھی اور طالبان حکومت کا خاتمہ کردیا تھا۔

جبکہ کابل کی فتح کی تاریخ 15 اگست اور وادی پنج شیر کی فتح کی تاریخ 6 ستمبر بھی انتہائی اہمیت کی حامل ہے۔ 15 اگست کو ہر سال بھارت کا یوم آزادی ہوتا ہے جس دن طالبان نے کابل فتح کیا تھا جبکہ 6 ستمبر پاکستان کے لئے ایک اچھا دن اور بھارت کیلئے ایک برا دن ہے۔

چھ ستمبر 1965 کو پاکستان نے بھارت کے خلاف جنگ میں فتح کی تھی ، اس جنگ میں پاکستان نے بھارت کے ہزاروں میل علاقے پر قبضہ کرلیا تھا اور بعدازاں پاکستان نے بھارت سے مذاکرات کے بعد یہ علاقے بھارت کو واپس کردئیے تھے۔

وادی پنج شیر کو طالبان بہت بڑی فتح گردان رہے ہیں کیونکہ وادی پنج شیر طالبان مخالفین شمالی اتحاد کا گڑھ ہے اور نوے کی دہائی میں طالبان پوری کوشش کے باوجود وادی پنج شیر فتح نہ کرسکے تھے۔جب امریکہ نے افغانستان پر حملہ کیا تھا تو شمالی اتحاد نے امریکہ کا ساتھ دیا تھا اور اس وقت وادی پنج شیر ہی طالبان کے خلاف فتح کا ٹرننگ پوائنٹ ثابت ہوئی تھی۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >