اسرائیلی جیل سے 5 فلسطینی قیدی سرنگ کھود کر فرار

اسرائیلی جیل سے 5 فلسطینی قیدی سرنگ کھود کر فرار

اسرائیل کی محفوظ ترین جیل میں قید 5 فلسطینی سرنگ کھود کرفرار ہوگئے ہیں، فرار ہونے والوں میں فلسطین کی اقصیٰ بریگیڈ کے رہنما بھی شامل ہیں۔

خبررساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق آزادی فلسطین اور یہودیوں کیلئے اسرائیلی ریاست کے قیام کے خلاف برسر پیکار تنظیم اقصیٰ بریگیڈ کے رہنما زکریا زبیدی عمر قید کی سزا کاٹنے کیلئے اسرائیل کی محفوظ ترین گلیوا جیل میں قید تھے۔

تاہم اس وقت اسرائیلی حکومت اور سیکیورٹی فورسز حیران پریشان رہ گئیں جب انہیں اطلاع ملی کے زکریا زبیدی جیل سے سرنگ کھود کر فرار ہونے میں کامیاب ہوگئے ہیں۔

رپورٹس کے مطابق زکریا زبیدی نے اپنے پانچ ساتھیوں کے ہمراہ جیل کے ٹوائلٹ میں فلش کے نیچے سے سرنگ کھودی جو اس قدر تنگ تھی کہ اس میں سے کسی ایک انسان کا گزرنا ناممکن گمان ہوتا ہے۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق جیل کے باہر کھیتوں میں 6 مشکوک افراد کو دیکھ کر کسانوں نے پولیس کو اطلاع دی جنہوں نے قیدیوں کے سرنگ سے نکل کر فرار ہونے کے مقام کو تلاش کیا۔

سوشل میڈیا پر ٹوائلٹ کے اندر سے کھودی گئی سرنگ اور جیل کے باہر اس کے کنارے کی تصاویر اور ویڈیوز منظر عام پر آئی ہیں، جیل کے باہر والے سراخ کے قریب اسرائیلی سیکیورٹی فورسز کے اہلکار حیران پریشان کھڑے دکھائی دے رہے ہیں کہ یہاں سے کوئی انسان نکل کیسے سکتا ہے۔

تحقیقاتی ٹیم کے مطابق زکریا زبیدی نے اپنے پانچ ساتھیوں کے ہمراہ جیل کے ٹوائلٹ میں زنگ آلود چمچوں کی مدد سے کھدائی کی اور ایک طویل سرنگ بنائی جس سے گزر کر یہ تمام لوگ جیل سے فرار ہونے میں کامیاب ہوئے۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >