طالبان نے افغانستان کی نئی حکومت اور کابینہ کا اعلان کردیا

طالبان نے افغانستان کی نئی حکومت اور کابینہ کا اعلان کردیا

افغانستان پر کنٹرول سنبھالنے کے بعد آج طالبان نے باضابطہ طور پر نئی افغان حکومت اور کابینہ کا اعلان کردیا ہے۔

خبررساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق ترجمان طالبان ذبیح اللہ مجاہد نے پریس کانفرنس کے دوران افغانستان کے نئے وزیراعظم اور کابینہ ارکان کی تفصیلات بتائیں۔ طالبان کی جانب سے جاری کردہ اعلامیہ کے مطابق ملا محمد حسن اخوند ریاست کے سرپرست یعنی عبوری وزیراعظم ہوں گے جبکہ ملا عبدالغنی برادر وزیراعظم کے نائب اور معاون ہوں گے۔

اعلامیہ کے مطابق مولوی عبدالسلام حنفی بھی وزیراعظم کے معاون ہوں گے جبکہ طالبان کے بانی ملا محمد عمر کے صاحبزادے اور طالبان ملٹری آپریشنز کے سربراہ ملا محمد یعقوب مجاہد کو وزارت دفاع کا قلمدان سونپا گیا ہے۔

ترجمان طالبان ذبیح اللہ مجاہد کا کہنا تھا کہ طالبان حکومت میں سراج الدین حقانی کو وزیر داخلہ، مولوی امیر خان کو وزیر خارجہ، ملا ہدایت اللہ بدری کو وزیر خزانہ مقرر کیا گیا ہے۔

طالبان حکومت میں قاری فصیح الدین کو آرمی چیف، شیخ منیر اللہ کو وزرت تعلیم، ملا خیر اللہ کو وزارت اطلاعات اور شیخ مولوی نور محمد ثاقب کو وزارت حج و اوقاف کا قلمدان سونپا گیا ہے۔

ذبیح اللہ مجاہد نے بتایا کہ ملا محمد عیسیٰ اخوند کو وزیر پیٹرولیم، خلیل الرحمان حقانی کو وزیر مہاجرین ، ملا حمید اللہ اخند کو وزیر ٹرانسپورٹ جبکہ ملا عبدالمنان عمری کو فوائد عامہ کا وزیر مقرر کیا گیا ہے۔

  • Masha Allah, may Allah guide the and give them every success to form a great Islamic Afghanistan, with all the rights as prescribed in Shariya. No discrimination, no bias , no misuse of power, no delay in justice, every one gets his / her due rights.


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >