کرونا وائرس: سرجیکل ماسک مارکیٹ سے غائب، قیمتیں آسمان پر پہنچ گئیں

پاکستان میں کرونا وائرس، سرجیکل ماسک مارکیٹ سے غائب

Face Mask

ہر گھنٹے بعد ریٹ تبدیل ہونے لگا، بیرون ملک اسمگلنگ اور ذخیرہ اندوزی شروع

تفصیلات کے مطابق پاکستان میں کرونا وائرس کے دو کیسز کی تصدیق ہوتے ہی تاجروں نے روایتی رنگ دکھانا شروع کر دیا۔

پاکستانی منافع خوروں نے پورے پاکستان سے ڈسٹ ماسک جسے این-95 بھی کہا جاتا ہے مارکیٹ سے غائب کردیئے گئے ہیں۔

چند دکانوں اور فارمیسی پر دستیاب یہ ڈسٹ ماسک جس کی مالیت محض 40 سے 45 روپے کی ہے اب 350 سے 400 میں دستیاب ہیں۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ جس کے پاس ماسک ہے وہ بلیک کررہا ہے، ماسک کی بیرون ملک اسمگلنگ ہورہی ہے، مارکیٹ میں ہر گھنٹے بعد ماسک کے ریٹ تبدیل ہورہے ہیں۔

ایک طرف پاکستان میں دو کیسز کنفرم ہو چکے ہیں اور دوسری طرف ارباب اختیار کو اس بات کی کوئی پرواہ نہیں کہ ماسک مارکیٹ سے غائب ہو رہے ہیں۔

خیال رہے پاکستان میں کرونا وائرس سے شکار ہونے والے دو افراد کی تفصیلات سامنے آگئیں، کراچی میں رپورٹ ہونے والے کرونا وائرس کے شخص کی شناخت یحییٰ جعفری کے نام سے ہوئی ہے جو زیارت کر کے چند روز قبل ایران سے کراچی پہنچا تھا۔

دوسرے شخص کا تعلق قبائلی علاقے سے ہے اور وہ بھی ایک ہفتے قبل ایران سے لاہور پہنچا تھا، متاثرہ شخص میں کرونا وائرس کی علامات ظاہر ہونے پر اسلام آباد کے پمز اسپتال منتقل کیا گیا جہاں خون کے نمونے لے کر قومی ادارہ صحت بھیجے گئے۔

دوسری طرف کرونا وائرس کے ممکنہ خطرے کے پیش نظر بلوچستان اور سندھ نے تعلیمی ادارے بند رکھنے کا اعلان کیا ہے۔


  • 24 گھنٹوں کے دوران 🔥

    View More

    From Our Blogs in last 24 hours 🔥

    View More

    This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept

    >