سندھ حکومت کا بڑا فیصلہ، نماز جمعہ کے اجتماعات پر پابندی عائد کردی

تفصیلات کے مطابق کرونا وائرس کے پھیلاؤ کے خدشے کے پیش نظر سندھ حکومت نے بڑا فیصلہ کرتے ہوئے نماز جمعہ کے اجتماعات پر پابندی عائد کردی ہے تاکہ وائرس کے پھیلاؤ کو مزید بڑھنے سے روکا جاسکے۔

ترجمان سندھ حکومت مرتضی وہاب کا نجی ٹی وی کے ساتھ گفتگو کرتے ہوئے کہنا تھا کہ کل سے پانچ اپریل تک تمام مساجد میں نماز جمعہ کے اجتماعات نہیں ہوں گے تاہم نماز جمعہ میں مسجد کی انتظامیہ شرکت کر سکے گی۔ نجی ٹی وی سے گفتگو میں انکا کہنا تھا کہ کل بروز جمعہ 27 مارچ سے ہر نماز میں باہر سے نمازیوں کی آمد پر پابندی ہو گی۔

ترجمان سندھ حکومت مرتضیٰ وہاب کا نجی ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے مزید کہنا تھا کہ سندھ حکومت کی جانب سے مساجد بند نہیں کی جارہیں تاہم مسجد کی انتظامیہ اور تین سے چار افراد کو باجماعت نماز ادا کرنے کی اجازت ہوگی۔ جن میں امام اور موذن سمیت خادم اور دیگر افراد شامل ہونگے۔ سندھ حکومت کی جانب سے یہ اقدام نمازیوں کی صحت اور ان کی جان بچانے کے لیے اٹھایا گیا ہے۔

ترجمان سندھ حکومت نے اپنی گفتگو میں واضح کیا کہ سندھ حکومت کی جانب سے یہ احکامات علماء کرام سے مشاورت کے بعد جاری کیے گئے ہیں۔ علماء کرام کا سندھ حکومت کے ساتھ مشاورت میں کہنا تھا کہ اس حساس معاملے پر احتیاط برتی جائے۔

دوسری جانب ترجمان سندھ حکومت سینیٹر مرتضی وہاب کی جانب سے سندھ حکومت کے بڑے فیصلے کے حوالے سے سماجی رابطے کی  سائٹ پر ٹوئٹ بھی کیا گیا جس میں انہوں نے لکھا کہ ” ‏کورونا وائرس کے پھیلاؤ کو روکنے کے لئے حکومت سندھ کا بڑا فیصلہ، مساجد میں عام افراد باجماعت نماز ادا نہیں کرسکیں گے، فیصلہ تمام مکاتب فکر کے علمائے اکرام اور طبی ماہرین کی مشاورت کے بعد کیا گیا ہے۔ مسجد کے عملے سمیت پانچ افراد باجماعت نماز پڑھ سکیں گے۔شہری فیصلے کی پابندی کریں”


  • 24 گھنٹوں کے دوران 🔥

    View More

    From Our Blogs in last 24 hours 🔥

    View More

    This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept

    >