قرنطینہ سے برہنہ حالت میں بھاگنے والے بھارتی شہری کے کاٹنے سے خاتون ہلاک

بھارت میں کرونا وائرس کا ایک مشتبہ مریض قرنطینہ سے برہنہ حالت میں فرار ہو گیا اور ایک عمر رسیدہ خاتون کو کاٹ لیا جس سے خاتون کی موت واقع ہوگئی۔

انڈین نیوز چینل این ڈی ٹی وی کے مطابق پولیس نے بتایا ہے کہ 35 سالہ شخص مانی کندن کچھ عرصہ پہلے سری لنکا سے آیا تھا اور اسے گھر پر قرنطینہ کیا گیا تھا، تاہم وہ گھر سے برہنہ حالت میں بھاگ نکلا اور ایک 80 سالہ خاتون کی گردن پر کاٹا جس سے انہیں گہرا زخم آیا جس سے تشویشناک حالت کے پیش نظر خاتون کو اسپتال میں داخل کیا گیا تاہم خاتون نے دوران علاج دم توڑ دیا۔

کرونا وائرس کے مشتبہ مریض کو پولیس نے پکڑ کر مقامی اسپتال میں داخل کرایا جہاں ضروری ٹیسٹ لینے کے علاوہ دماغی اور نفسیاتی معائنہ بھی کیا گیا۔ ڈاکٹروں کے مطابق خوف، گھبراہٹ اور دباؤ کے باعث مریض کا دماغی توازن بگڑ گیا ہے۔

ملزم کے اہل خانہ کا کہنا ہے کہ مانی کندن سری لنکا سے واپس آنے کے بعد کاروبار میں نقصان ہونے پر پریشان تھااور ان کی دماغی حالت بگڑ چکی تھی۔پولیس کے مطابق مانی کندن کو گرفتار کر کے اس کے خلاف قتل کا مقدمہ درج کر لیا ۔

واضح رہے کہ بھارت میں کورونا وائرس کے 1024 مریضوں کی تصدیق ہوئی ہے جب کہ اس مہلک وائرس سے تاحال 27 ہلاکتیں ہوچکی ہیں۔

OR comment as anonymous below

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے


24 گھنٹوں کے دوران 🔥

View More

From Our Blogs in last 24 hours 🔥

View More