کورونا وائرس:مفت ملنے والا راشن دکانوں پر فروخت ہونے لگا

 

کورونا وائرس کے دوران ملک بھر میں لاک ڈاؤن ہے، جس کے باعث تمام تر معاشی سرگرمیاں معطل ہیں، اور ہر قسم کے کاروباری معاملات بھی ٹھپ ہوکر رہ گئے ہیں،

مزدور، دیہاڑی پر کام کرنے والے، فیکٹری ورکرز، رکشہ ٹیکسی ڈرائیوز اور دیگر لوئر مڈل کلاس کے لوگوں کیلئے روزمرہ ضروریات پوری کرنا ناممکن ہوتا جارہا ہے، غریب اور نادار افراد کا کہنا ہے کہ ہمیں کورونا سے زیادہ بھوک کی فکر ہے ہمارے پاس کام نہیں ہے ہم کمائیں گے نہیں تو اپنا اور اپنے بچوں کا پیٹ کیسے پالیں گے۔

اس صورتحال میں حکومت اور دیگر سماجی اداروں کی جانب سے غریبوں اور سفید پوش افراد کی مدد کی مہم بھی جاری ہے، ملک میں مخیر افراد کی ایک کثیر تعداد غریبوں میں راشن اور دیگر اہم ضروریات کا سامان مہیا کرنے کی کوششیں جاری رکھے ہوئے ہے جبکہ حکومتی سطح پر بھی غریب اور نادار افراد کی مدد کیلئے ماہانہ رقم دینے کے اقدامات کیے جارہے ہیں ، ایسے میں سوشل میڈیا پر ایک ویڈیو وائرل ہوئی جس میں ایک شخص کریانہ کی دکان پر مفت میں ملا ہوا راشن فروخت کرتا ہوا نظر آرہا ہے،

کسی سماجی ادارے کی جانب سے غریبوں میں راشن تقسیم کیاگیا جس کے بعد راشن وصول کرنے والا ایک شخص قریب ہی کہ ایک کریانہ دکان پر وہی راشن فروخت کرتا ہوا نظر آیا، ویڈیو بنانے والے نے اس کو پکڑ کر اس سے سوال کیا کہ تمہیں راشن ملا تو تم نے یہاں فروخت کیا؟ جس پر وہ شخص ہنسنے لگا اور سائیڈ پر ہوگیا، دکان میں امداد میں ملا ہوا راشن بھی موجود تھا جوکچھ دیر پہلے اس شخص نے فروخت کیا۔

بحران اور مشکل کی کیفیت میں غریبوں اور نادار افراد کی مدد کرنے والے اپنی اپنی استطاعت کے مطابق اس کارِخیر میں حصہ لے رہے ہیں وہیں کچھ ایسے لوگ بھی ہیں جو اس موقع سے فائدہ اٹھا رہے ہیں جو اس امداد کے قابل نہیں ہیں، یہ ایسا کرکے کسی مستحق کا حق ماررہے ہیں جسے اس راشن کی اشد ضرورت ہے، امداد کرنے والے لوگ اصل مستحق تک مدد پہنچانے کی حتی الامکان کوشش کریں اور ایسے افراد کی حوصلہ شکنی کریں جو غریبوں کا حق ماریں۔

    (77 posts)

    اگریہ قوم چور، جھوٹی اور منافق نہ ہوتی, نہ تو بھٹو اتا اور نہ ہی ڈاکو "شریف خاندان”، جو بھی شخص لالچی ہے وہ جھوٹ بھی بولے گا اور منافقت بھی کرے گا، ہمیں غور کرنا چاہئیے کہ ( 2020) میں بھی ہم اسی طرح زندگی گزارنا چاہتے

OR comment as anonymous below

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے


24 گھنٹوں کے دوران 🔥

View More

From Our Blogs in last 24 hours 🔥

View More