کرونا وائرس سے نوزائیدہ بچے بھی غیر محفوظ،رومانیہ میں دس بچےکرونا وائرس کا شکار

تفصیلات کے مطابق کرونا وائرس کی تباہ کاریاں جاری ہیں۔ ایک طرف جہاں جوان اور بوڑھے کرونا وائرس کا شکار ہو رہے ہیں وہیں نوزائیدہ بچے بھی کرونا وائرس سے غیر محفوظ ہیں۔ رومانیہ کے ایک ہی میٹرنٹی ہوم کے دس نوزائیدہ بچے کرونا وائرس کا شکار ہو گئے۔

عالمی خبر رساں ادارے کے مطابق یورپی ملک رومانیہ کے ایک شہر تمیسورا کے میٹرنٹی ہوم میں جنم لینے والے نومولود بچوں کے صحت حکام کی جانب سے کرونا کے ٹیسٹ کیے گئے جس کے بعد میٹرنٹی ہوم میں موجود بچوں میں سے دس نوزائیدہ بچوں میں کرونا کے ٹیسٹ مثبت رپورٹ کیے گئے۔ تاہم حیران کن بات یہاں یہ کہ کرونا کے شکار دس نوزائیدہ بچوں کی ماؤں کے ٹیسٹ منفی رپورٹ کیے گئے۔

متاثرہ بچوں کی ماؤں نے اپنے نوزائیدہ بچے میں کرونا وائرس کی تصدیق کے بعد ہسپتال کے طبی عملے کو سخت تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ بچوں کی پیدائش کے دوران طبی عملے کی جانب سے مناسب حفاظتی اقدامات نہیں کیے گئے تھے جبکہ حفاظتی عملے کی جانب سے دستانوں کا استعمال بھی نہیں کیا گیا۔

رومانیہ کے محکمہ صحت کے حکام نے نوزائیدہ بچوں میں کرونا وائرس کی تصدیق کے بعد ہسپتال کے میٹرنٹی ہوم کے عملے کا کرونا کا ٹیسٹ کرنے کا فیصلہ کیا ہے تاکہ کرونا کے پھیلاؤ کو روکنے اور تدارک کے لیے بروقت اقدامات کئے جا سکیں۔ دوسری جانب محکمہ صحت کے حکام کی جانب سے متاثرہ بچوں کی طبیعت بہترین بتائی جارہی ہے اور کہا جا رہا ہے کہ تاحال ان میں کرونا وائرس کی کوئی علامات ظاہر نہیں ہوئیں۔

واضح رہے کہ رومانیہ میں کرونا وائرس کی تصدیق شدہ مریضوں کی تعداد 4500 تک پہنچ چکی ہے جن میں سے 700 ڈاکٹر اور طبی عملہ بتایا جارہا ہے جن کو قرنطینہ کرکے علاج شروع کر دیا گیا ہے۔

OR comment as anonymous below

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے


24 گھنٹوں کے دوران 🔥

View More

From Our Blogs in last 24 hours 🔥

View More