کرونا وائرس: امریکی صدر کی دھمکی پر عالمی ادارہ صحت کا سخت ردعمل

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی عالمی ادارہ صحت کو فنڈز روکنے کی دھمکی۔ عالمی ادارہ صحت کی امریکی صدر کے بیان کی مذمت

عالمی ادارہ صحت نے امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی جانب سے لگائے گئے الزامات کو مسترد کردیا اور کہا کہ ٹرمپ کا بیان حقائق کے منافی ہے، کرونا وائرس جیسی وبا اور نازک صورتحال میں فنڈز روکنے کی دھمکی نامناسب ہے۔

عالمی ادارہ صحت کے ڈائریکٹر جنرل کے مشیر نے امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے بیان کو مسترد کردیا اور کہا کہ ڈبلیو ایچ او ایک غیر جانبدار ادارہ ہے جس نے چین سمیت کرونا وائرس میں مبتلا دیگر ممالک کی بلاتفریق مدد کی ہے۔

عالمی ادارہ صحت کے ڈائریکٹر جنرل کے مشیر نے ڈاکٹر بروس ایلورڈ نے صدر ٹرمپ کی فنڈز بند کرنے کی دھمکی کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ دنیا ایک خطرناک وائرس سے نبرد آزما ہے اور یہ وقت فنڈنگ روکنے اور الزام تراشی کا نہیں بلکہ ایک دوسرے کا ہاتھ مضبوط کرنے کا ہے۔

ڈاکٹر بروس ایلورڈنے یورپ میں کرونا وائرس کے بڑھتے ہوئے کیسز پر تشویش کا اظہار بھی کیا اور کہا کہ یورپی ممالک کورونا وائرس کیخلاف سخت اور منظم اقدامات کریں اور ہر قسم کی احتیاطی تدابیر کو لازمی اختیار کریں اور شہریوں پر بھی لاگو کریں۔

واضح رہے کہ صدر ٹرمپ نے عالمی ادارہ صحت کو سخت تنقید کا نشانہ بنایا تیا اور عالمی ادارہ صحت پر چین کے لیے جانبدار ہونے کا الزام لگاتے لگایا تھا۔ ڈونلڈ ٹرمپ نے عالمی ادارہ صحت کے فنڈز روکنے کی دھمکی بھی دی اور کہا کہ عالمی ادارہ صحت نے کرونا وائرس کا پھیلاؤ روکنے کے لیے سست روی کے ساتھ فیصلے اور اقدامات کیے گئے جس کی وجہ سے یہ وبا عالمی سطح پر سنگین ہوگئی۔

OR comment as anonymous below

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے


24 گھنٹوں کے دوران 🔥

View More

From Our Blogs in last 24 hours 🔥

View More