پنجاب: بغیرعلامات کنفرم مریض کیلئےڈبل منفی کرونا ٹیسٹ کی شرط ختم

کرونا وائرس کی جہاں علامات تبدیل ہورہی ہیں وہیں متعدد ایسے متاثرین بھی ہیں جو بنا کسی علامات کے اس وائرس کا شکار ہوجاتے ہیں,

کرونا متاثرین کو اسپتالوں سے ڈسچارج کرنے اور قرنطینہ کے لیے ترمیم شدہ معیار جاری کر دیا گیا ہے,ترمیم شدہ معیار محکمہ صحت پرائمری اینڈ سیکنڈری نے کرونا ایکسپرٹ ایڈوائزری گروپ کی ہدایات پر جاری کیا ہے۔

نئے مراسلے کے مطابق بغیر علامات جن افراد کا کرونا ٹیسٹ مثبت آئے گا انہیں چودہ روز نہیں لیکن کم از کم دس دن قرنطینہ میں گزارنا ہونگے،

دوائی کے بغیر بخارختم ہونا، سانس کے نظام اورخشک کھانسی میں بہتری تک مریض قرنطینہ میں رہیں، مریضوں کی دیکھ بھال کرنے والے ہیلتھ ورکرز کوقرنطینہ سے نکلنے کیلئے دومسلسل ٹیسٹ نیگٹو آنا لازمی ہوگا

دوسری جانب ہاسٹلز، مدرسوں اورجیلوں میں اجتماع کی صورت میں رہنے والوں کے بھی دوکرونا ٹیسٹ منفی آنا ضروری ہے ، قرنطنیہ کے ختم کرنے کے لئے کمزور قوت مدافعت کانظام کمزور ہوگا، ان کے بھی24 گھنٹے میں دوٹیسٹ منفی آنا لازم ہوگا، جبکہ جن کی علامات سات دن میں ختم ہوجائینگی۔

انہیں دس دن اور جن متاثرین کی علاما ت 8دن میں ختم ہونگی انہیں گیارہویں دن ڈسچارج کیاجائےاور 9دن میں ختم علامات ختم ہونےپر ان متاثرین کو بارہ دن بعد کیاجائیگا، دس دن میں علامات ختم ہونے والے مریضوں کو 13 دن کے بعد ڈسچارج کیاجائے گا۔

پاکستان میں کرونا وائرس سے اب تک دو لاکھ 13 ہزار سے زائد افراد متاثر ہوچکے ہیں جبکہ 4395 اموات ہوئی ہیں۔ اب تک ایک لاکھ سے زائد افراد صحتیاب بھی ہو چکے ہیں۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >