کرونا وائرس کی دوسری لہر، نیوزی لینڈ میں دوبارہ مکمل لاک ڈاون نافذ کر دیا گیا

دنیا بھر میں کورونا وائرس کی دوسری لہر سر اٹھا رہی ہے جس کی وجہ سے عالمی سطح پر کیسز کی رفتار میں تاحال نمایاں کمی نہیں آسکی، اور نہ ہی کرونا وائرس کی وبا پر قابو پایا جا سکا ہے۔

آکلینڈ میں کرونا وائرس کے چار نئے کیسز سامنے آنے کے بعد نیوزی لینڈ لاک ڈاؤن کی پابندیوں میں دوبارہ داخل ہو گیا، لاک ڈاون کے نفاذ کا اعلان نیوزی لینڈ کی وزیراعظم جیسنڈا آرڈرن نے ایک پریس کانفرنس کرتے ہوئے کیا، انہوں نے کہا کہ آکلینڈ میں رہائش پذیر گھرانے کے 4 افراد میں کرونا وائرس کی تصدیق ہوئی ہے۔

انہوں نے کہا کہ نیوزی لینڈ کے سب سے بڑا شہر آکلینڈ میں کچھ پابندیاں لگائی جارہی ہیں، جن کی وجہ سے رہائشیوں کو کچھ روز تک مشکلات کا سامنا کرنا پڑے گا، آکلینڈ کے علاوہ باقی ملک میں لیول ٹو کی پابندیاں لگائی جائیں گی۔

جیسنڈا آرڈرن نے کہا کہ پورے شہر اور نیوزی لینڈ کے دیگر شہروں میں دوبارہ سے پابندیاں لگانا ہمارے لئے آسان فیصلہ نہیں ہے بلکہ یہ بہت ہی اہم فیصلہ ہے، ہمیں یہ یقینی بنانا ہوگا کہ ہمارے پاس کرونا کے شکار مریضوں کی زیادہ سے زیادہ معلومات موجود ہیں۔

انہوں نے کہا کہ اس اقدام کا مطلب یہ ہے کہ ہم محتاط رہ سکتے ہیں لیکن یہ بھی یقینی بنائیں کہ ہمارے پاس کوئی فیصلہ کرنے سے پہلے زیادہ سے زیادہ معلومات موجود ہوں جس کا طویل مدتی اثر پڑتا ہے۔

آرڈرن نے کہا کہ 100 دنوں کے زیادہ عرصے میں کرونا کا شکار سامنے آنے والا مریض پہلا کیس ہے، جو آئسولیشن میں نہیں تھا، جس کی وجہ سے ملک میں دیگر افراد کے کرونا وائرس میں مبتلا ہونے کا خدشہ ہے، تاہم نیوزی لینڈ اس سے پہلے والی کامیاب حکمت عملی کا سہارا لے گا۔

انہوں نے کہا کہ ہم ایک بار پھر ایک ساتھ مل کر تیزی کے ساتھ کرونا وائرس کی وبا کو شکست دے سکتے ہیں، ہم پھر سے ایسا کرسکتے ہیں۔ ہم جانتے ہیں کہ کیا کرنا ہے کیونکہ اس سے پہلے بھی ہم یہ کامیابی کے ساتھ کر چکے ہیں، موجودہ معلومات کے مطابق کرونا وائرس کے چاروں کیسز ایک ہی گھر رپورٹ ہوئے ہیں، لیکن وبائی صورتحال نے ایک سے زیادہ جگہ کو خطرے میں ڈال دیا ہے۔

  • AoA, I would like to add to the news that the New Zealand is not going into complete ‘lockdown’. There are specific alert levels in place depending on the COVID spread/possibility of spread. There have been four cases and a fact of Community transmission is established hence Auckland goes to Alert Level 3 which means do not go out until necessary. Most of the offices, businesses and services will remain closed and workers/staff advised to work from home until midnight Friday other than essential services that do include grocery stores,meat shops etc and it does not mean that we are going into total lockdown.


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >