چین کی کورونا وائرس ویکسین آخری ٹرائلز میں 90 فیصد سے زائد موثر ثابت

چینی کمپنی سائنوویک بائیوٹیک کی تیار کردہ کورونا وائرس ویکسین کے ترکی میں ہونے والے آخری ٹرائلز کے تنائج 91.25 فیصد تک مثبت آئے ہیں۔

بین الاقوامی خبررساں ایجنسی رائٹرز کی رپورٹ کے مطابق اسی کمپنی کی تیار کردہ ویکسین کے برازیل میں ہونے والے ٹرائلز کے تنائج مختلف ہیں جبکہ ترکی میں اس کے تنائج حوصلہ افزاء ہیں۔

رپورٹ کے مطابق برازیل میں اس ویکسین کے تیسرے مرحلے کے ٹرائلز میں نتائج 50 فیصد تک موثر رہے ہیں، تاہم کمپنی کی درخواست پر برازیل نے اس ٹرائل کے مکمل تنائج کی تفصیلات شیئر نہیں کی ہیں جس پر اس کی شفافیت پر سوالات اٹھنا شروع ہوگئے ہیں۔

دوسری جانب ترکی میں ہونے والے ٹرائلز میں ریسرچرز کا کہنا ہے کہ ٹرائلز کے دوران کسی بھی قسم کا سائیڈ افیکٹ ظاہر نہیں ہوا ہے، سوائے ایک شخص کے جسے کچھ الرجک ردعمل ظاہر ہوا تھا، اس ویکسین سے عمومی طور پر بخار، ہلکا زکام و درد جیسے اثرات آتے ہیں جو ایک نارمل بات ہے۔

ترکی میں اس ویکسین کے ٹرائلز14 ستمبر کو شروع ہوئے تھے جس میں 7ہزار سے زائد رضاکاروں نے حصہ لیا، پیش کردہ تنائج 13 سو22 افراد پر مشتمل تھے جن پر اس ویکسین کو ٹیسٹ کیا گیا

ترکی کے ریسرچرز اور وزیر صحت محرتین کوکا نے میڈیا کے سامنے یہ تنائج رکھے اس موقع پر وزیر صحت کا کہنا تھا کہ ہم اس بات پر قائل ہیں کہ یہ ویکسین ترکی کے لوگوں پر استعمال کیلئے محفوظ بھی ہے اور موثر بھی، عنقریب اس ٹرائل کے ڈیٹا کی بنیاد پر کمپنی کو ویکسین کیلئے لائسنس جاری کرنے سے متعلق کارروائی کو آگے بڑھائیں گے۔


Featured Content⭐


24 گھنٹوں کے دوران 🔥


From Our Blogs in last 24 hours 🔥


>