آسٹرازینکا پاکستان میں کورونا ویکسین رجسٹرڈکروانے کی خواہش مند

برطانوی کمپنی آسٹرازینیکا نے پاکستان میں کورونا وائرس کی ویکسین رجسٹرڈ کروانے میں دلچسپی ظاہر کر دی۔

خبررساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق ایک مقامی فارماسوٹیکل کمپنی نے آسٹرازینیکا کی ویکسین سے متعلق درخواست ڈرگ ریگولیٹری اتھارٹی آف پاکستان میں جمع کروائی ہے، اور اس ویکسین کو پاکستان میں رجسٹرڈ کروانے کیلئے اجازت طلب کی گئی ہے۔

آسٹرازینیکا اور آکسفورڈ یونیورسٹی کے اشتراک سے تیار کردہ اس ویکسین کو سب سے پہلے دسمبر 2020 کے آخر میں برطانیہ میں رجسٹرڈ کیا گیا تھا، یہ ویکسین استعمال میں آسان اوراپنے جیسی دوسری ویکسینز سے قیمت میں کم ہے۔

تاہم اس ویکسین کی ابھی تک موثر ڈوزیج سے متعلق معاملات غیر یقینی صورتحال کا شکار ہیں، نومبر میں شائع ہونےوالی ایک رپورٹ کے مطابق ایک فل ڈوز کے بعد ایک آدھی ڈوز سے 90 فیصد مثبت نتائج حاصل کیے گئے جبکہ 2 فل ڈوزز سے صرف 62 فیصد نتائج مل سکے۔

یاد رہے کہ 2 روز قبل وزیراعظم عمران خان کے معاون خصوصی ڈاکٹر فیصل سلطان کا کہنا تھا کہ ہم پرامید ہیں کہ پاکستان رواں سال فروری کے شروع میں ویکسین کی پہلی کھیپ حاصل کرنے میں کامیاب ہوجائےگا۔

انہوں نے کہا تھا کہ”ہم امید کرتے ہیں کہ ہم رواں سال کے پہلی سہ ماہی میں سائنوفارم سے کورونا ویکسین حاصل کرنے میں کامیاب ہوجائیں گے، اور ہم اسی سہہ ماہی سے ہی ملک میں ویکسینیشن کا عمل بھی شروع کرنے کا ارادہ رکھتے ہیں۔

پاکستان کی جانب سے گزشتہ ماہ اعلان کیا گیا تھا کہ کورونا وائرس کی 12 لاکھ ڈوزز سائنوفارم سے خریدی جائیں گی۔


Featured Content⭐


24 گھنٹوں کے دوران 🔥


From Our Blogs in last 24 hours 🔥


>