کورونا کیسز کے پیش نظر بچوں کو ویکسین لگانے پر غور ہو رہا ہے،سیکریٹری صحت

کورونا وائرس کی تیسری لہر کے بچوں پر بھی وار جاری ہیں، پنجاب میں متعدد بچے مہلک وائرس کا شکار ہوگئے ہیں، جس کے لئے اقدامات انتہائی ضروری ہیں،پارلیمانی سیکریٹری صحت ڈاکٹر نوشین کا کہنا ہے کہ دنیا بھر میں کورونا ویکسین کے ٹرائلز بچوں پر نہیں ہوئے، مستقبل میں کورونا ویکسین بچوں کو دینے پر غور ہو رہا ہے، لیکن حتمی فیصلہ نہیں ہوا ہے۔

نجی ٹی وی سے گفتگو میں ڈاکٹر نوشین حامد نے بتایا کہ حکومت نے پرائیویٹ سیکٹر کو ویکسین منگوانے کے لیے فیسی لیٹیٹ کیا ہے، پرائیویٹ سیکٹر محدود تعداد میں ہی ویکسین منگوا سکتا ہے،کل مزید 5 لاکھ ویکسین کی ڈوزز آجائیں گی،حکومت کا انحصار پرائیویٹ سیکٹر پر نہیں ہے۔

نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر کے مطابق پاکستان میں کورونا سے بچوں کی بھی اموات ہوئیں، جن میں اب تک ایک سال سے 10 سال کے 40 بچے زندگی کی بازی ہارچکے ہیں، جبکہ ملک میں 11 سے 20 سال تک کے 136 بچے اور نوجوان بھی انتقال کرچکے ہیں۔

اسلام آباد میں ایک دن میں 49 بچے کورونا وائرس کا شکار ہوئے،جس کے بعد مجموعی طور پر اسلام آباد میں ایک سال سے 10 سال کی عمر کے 5 ہزار 291 بچے کورونا کا شکار ہوچکے ہیں۔


Featured Content⭐


24 گھنٹوں کے دوران 🔥


From Our Blogs in last 24 hours 🔥


>