پاکستان کورونا ویکسینیشن مکمل کرکے جی ڈی پی میں اضافہ کر سکتا ہے، عالمی بنک کی رپورٹ

عالمی بینک نے نئی رپورٹ میں دعوی کیا ہے کہ کورونا وائرس کی ویکسینیشن پر ہونے والے اخراجات کے مقابلہ میں پاکستان سات گنا زیادہ معاشی فوائد حاصل کر سکتا ہے۔

تفصیلات کے مطابق عالمی بینک نے “ساﺅتھ ایشیا ویکسی نیٹ” رپورٹ جاری کر دی۔

رپورٹ کے مطابق پاکستان اپنے عوام کی کورونا وائرس کی ویکسی نیشن سے مجموعی قومی پیداوار (جی ڈی پی) میں اضافہ کر سکتا ہے۔

رپورٹ کے مطابق اضافے کی شرح 2.2 فیصد تا 6.7 فیصد تک ہے۔

عالمی بینک کا کہنا ہے کہ پاکستان میں کورونا وائرس کی ویکسین پر اخراجات کا تخمینہ دو ارب 30 کرؤر ڈالر لگایا گیا ہے تاہم عوام کی ویکسی نیشن کے ذریعے پاکستان مجموعی قومی پیداوار 14 ارب61 کروڑ ڈالر کے فوائد حاصل کر سکتا ہے۔

رپورٹ میں مزید کہا گیا ہے کہ پاکستان عوام کی ویکسی نیشن پر ہونے والے اخراجات کے مقابلہ میں سات گنا زیادہ معاشی فوائد حاصل کر سکتا ہے۔

دوسری جانب عالمی مالیاتی فنڈ (آئی ایم ایف) نے کہا ہے کہ کورونا وباء پر قابو پانے کے نتیجہ میں معاشی شرح نمو میں اضافہ سے صرف ترقی یافتہ ممالک میں 2025ء تک ٹیکسز کی مد میں ایک کھرب ڈالر کی اضافی آمدن حاصل کر سکتے ہیں جس کی مدد سے ترقی پذیر اور کم آمدن ممالک کی مالی معاونت اور ویکسین پر سرمایہ کاری کیلئے زیادہ آمدنی حاصل ہو سکے گی۔

واضح رہے کہ پاکستان میں ویکسی نیشن کا عمل بتدریج جاری ہے اور اب تک 15 لاکھ کے لگ بھگ افراد کو کورونا وائرس سے بچائو سے ویکسین لگائی چکی ہے۔ پاکستان ابھی تک دوست ملک چین سے ہی ویکسین حاصل کر رہا ہے اور محض چند لاکھ خوراکیں ہی خریدی ہیں۔

  • Iss kay liay government ko apni jaib dheeli karni paray gi. Government muftay kay chakron mein hai. Muft tab milay gi jab baqi countries lagwa lein gay. Kuchh arsay kay liay mobile tandoor aur panah gahain bund kar do aur wo paisay vaccination par laga do.


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >