کیاایسٹرازینیکاویکسین پر پابندی لگائی جارہی ہے؟ڈاکٹر فیصل سلطان کی وضاحت

کیا یسٹرازینیکاویکسین پر پابندی لگائی جارہی ہے؟ڈاکٹر فیصل سلطان کی وضاحت

وزیراعظم عمران خان کے معاون خصوصی برائے صحت ڈاکٹر فیصل سلطان نے کورونا وباء سے بچاؤ کی ویکسین ایسٹرا زینیکا پر پابندی سے متعلق خبروں کی تردید کردی۔

تفصیلات کے مطابق معاون خصوصی ڈاکٹر فیصل سلطان نے تردید کرتے ہوئے کہا ہے  کہ پاکستان میں اس ویکسین کا استعمال شروع ہوچکا ہے۔ معاون خصوصی کا کہنا تھا کہ ایسٹرا زینیکا ویکسین کا استعمال بے شمار ممالک میں ہورہا ہے جن میں آسٹریلیا، فرانس، جرمنی اور فن لینڈ جیسے ترقی یافتہ ممالک بھی شامل ہیں۔

ویکسین کے سائیڈ افیکٹ سے متعلق وضاحت کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ ویکسین کے منفی اثرات کی شرح بہت کم ہے۔ڈاکٹر فیصل کا مزید کہنا تھا کہ کرونا کی تمام ویکسینز اس وائرس کے لگ جانے کی صورت میں اس کے شدید اثرات سے بچانے میں مدد دیتی ہیں۔

ڈاکٹر فیصل نے ویکسین لگانے کے بعد بلڈ کلاٹنگ سے متعلق بھی وضاحت کی۔ ان کا کہنا تھا کہ یہ شرح انتہائی کم ہے جبکہ 10 لاکھ میں سے صرف 4 افراد کے ساتھ ایسا معاملہ پیش آنے کا امکان ہوتا ہے، بلڈ کلاٹنگ کے خدشے کے پیش نظر ویکسین 40 سال سے زائد عمر کے افراد کولگائی جا رہی ہے تاکہ اس انتہائی کم شرح والے خطرے کا بھی امکان نہ ہو۔

معاون خصوصی نے حالات کو معمول پر لانے کےلئے کورونا ایس او پیز پر عملدرآمد کے ساتھ عوام کی ویکسینیشن بھی ضروری قرار دے دی۔


Featured Content⭐


24 گھنٹوں کے دوران 🔥


From Our Blogs in last 24 hours 🔥


>