عوام کو کورونا ویکسی نیشن پر قائل کرنے کیلئے ویڈیو جاری

نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر (این سی او سی) نے معروف ٹیلی کام کمپنی جاز کے اشتراک سےشہریوں کو کورونا ویکسین کی اہمیت سے آگاہ کرنے اور ان کی غلط فہمیوں کو دور کرتے ہوئے ویکسی نیشن پر قائل کرنے کے لیے ویڈیو جاری کردی۔

اس ویڈیو میں پہلے مرحلے میں یہ بتایا گیا کہ کرونا وائرس کی وجہ سے ایک فیملی کن مشکلات اور مصیبتوں کا شکار ہوتی ہے جبکہ دوسرے مرحلے میں یہ افراد بتاتے ہیں کہ اگر ویکسین پہلے دستیاب ہوتی تو وہ کیا کرتے۔

این سی او سی اور جاز کی جانب سے جاری کردہ ویڈیو پیغام میں ایک شخص کرونا کا شکار ہونے اور قرنطینہ کے دوران پیش آنے والی مشکلات سے آگاہ کرتا ہے اور یہ بتاتا کہ وہ اس عرصے میں کس طرح اس خوف کا شکار رہا کہ کہیں اسکی وجہ سے اسکی فیملی کا کوئی ممبر کرونا سے متاثر نہ ہوجائے۔

ویڈیو میں خاتون کہتی ہیں کہ ان کی بہن کا کرونا ٹیسٹ مثبت آنے سے قبل ہی ان کے والد میں کرونا کی علامات ظاہر ہونا شروع ہوگئی تھیں جبکہ ایک بزرگ خاتون ویڈیو میں سانس لینے کے آکسیجن کی اہمیت کو اجاگر کرتی ہیں۔یہ خاتون کہتی ہیں کہ سانس لینے کی قدر تب ہوتی ہے جب سانس اکھڑ کر آتا ہے۔

ایک درمیانی عمر کے شخص وائرس سے متاثر ہونے کے بعد پیش آنے والے حالات و واقعات بیان کرتے ہوئے کہتا ہے کہ ایک دم سے تیز بخار ، اسے کچھ سمجھ نہیں آتا تھا کہ وہ کیا کرے۔

ویڈیو میں ان افراد سے جب سوال کیا جاتا ہے کہ اگر اس وقت ویکسین دستیاب ہوتی تو ان کا کیا فیصلہ ہوتا، تمام افراد کہتے ہیں کہ وہ بالکل وقت ضائع کیے بغیر ویکسی نیشن کراتے۔یہ ایک نعمت ہے اسے ضائع مت ہونے دیں۔

بعد ازاں ویڈیو کے ذریعے پیغام دیا جاتا ہے کہ ویکسین نے امیدیں بحال کی ہیں، جنہیں ختم نہیں ہونا چاہیے۔

دوسری جانب پاکستان میں کرونا ویکسی نیشن کا عمل تیز کردیا گیا ہے جس کی وجہ سے پاکستان میں کرونا وائرس کے نئے کیسز اور اموات میں بتدریج کمی کا سلسلہ جاری ہے، 24 گھنٹوں کے دوران 34 مریض جاں بحق ہوئے۔

این سی او سی کا کہنا ہے کہ گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران کرونا وائرس کے 1 ہزار 19 نئے کیسز رپورٹ ہوئے، ملک میں کووڈ 19 کے مجموعی کیسز کی تعداد 9 لاکھ 42 ہزار 189 ہوچکی ہے۔


Featured Content⭐


24 گھنٹوں کے دوران 🔥


From Our Blogs in last 24 hours 🔥


>