لاہور سمیت پنجاب بھر میں نوویکسین،نوسروس فارمولا رائج

پنجاب میں نو ویکسین، نو سروس فارمولا کے تحت ویکسین نہ لگوانے والوں کو آج سے پیٹرول نہیں ملے گا۔

کورونا ایس او پیز پر عملدرآمد کرانے کے لیے لاہور کی ضلعی انتظامیہ اور پولیس نے بڑے فیصلے کرلیے۔ آج سے شہر بھر میں ویکسین نہ کروانے والوں کو بنیادی سہولیات مہیا نہیں کی جائیں گی۔ لاہور میں شاپنگ مالز، بازار اور ریسٹورنٹس میں صرف ویکسی نیٹڈ افراد کو داخلے کی اجازت ہوگی۔

فیصلے کے مطابق لاہور سمیت پنجاب میں ویکسین نہ لگوانے والے شہریوں کو ٹرانسپورٹ میں جگہ نہیں ملے گی۔ اسی طرح کوئی ڈرائیور گاڑی بھی اڈے سے نہیں نکال سکے گا۔عمل در آمد کے لیے ٹرانسپورٹرز کو بھی ہدایات جاری کر دی گئیں۔

ویکسین نہ کروانے والے پولیس افسران اور اہلکار وں کے خلاف بھی کاروائی ہوگی۔ سی سی پی او لاہور نے ویکسین نہ لگوانے والوں کے خلاف پیڈا ایکٹ کے تحت کاروائی کا حکم دے دیا اور کہا ہے کہ ویکسین نہ کروانے والے اہلکاروں کے خلاف مقدمات بھی درج ہوں گے۔

لاہور الیکٹرک سپلائی کمپنی نے کورونا ویکسین نہ لگانے والے پانچ ہزار لیسکو ملازمین کی تنخواہ روک لی اور تنخواہوں کی ادائیگی ویکسین لگوانے سے مشروط کردی۔

ڈپٹی کمشنر لاہور نے اپنے ٹوئٹر پیغام میں لکھا کہ کرونا ویکسین لگوانے کی 31 اگست کی ڈیڈ لائن ختم ہوتے ہی ضلعی انتظامیہ لاہور کیجانب سے پیٹرول پمپس پر کورونا ویکسینیشن سرٹیفیکیٹ چیک کرنا شروع کر دئیے گئے ہیں۔آج سے پیٹرول پمپ انتظامیہ صرف ان افراد کو پیٹرول فراہم کرے گی جنکی ویکسینیشن ہو چکی ہوگی۔

ڈپٹی کمشنر لاہور کا کہنا تھا کہ ویکسین لگوائیں محفوظ رہیں، شکریہ

دوسری جانب کورونا سے بچاؤ اور اسکے پھیلاؤ کو روکنے کے لئے وفاقی حکومت نے ملک میں ویکسی نیشن کے لیے عمر کی حد کم کر کے سترہ سال کردی ہے۔


Featured Content⭐


24 گھنٹوں کے دوران 🔥


From Our Blogs in last 24 hours 🔥


>