18سال سے کم عمر شہریوں کو بھی فائزر ویکسین لگائی جانے کی منظوری

18سال سے کم عمر شہریوں کو بھی فائزر ویکسین لگائی جانے کی منظوری

نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر نے 18 سال سے کم عمر شہریوں کیلئے ویکسین پالیسی کو تبدیل کردیا ہے جس کے بعد اب 12 سے 17 سال کی عمر کے شہریوں کو بھی فائزر ویکسین لگائی جاسکے گی۔

خبررساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق این سی او سی نے 18 سال سے کم عمرشہریوں کیلئے ویکسین کی نظر ثانی گائیڈ لائنزجاری کردی ہیں جن کے مطابق 18 سال سے کم عمر وہ شہری جنہوں نے بیرون ملک سفر کرنا ہے انہیں فائزر کمپنی کی کورونا ویکسین لگائی جائے گی۔

اس کے علاوہ کمزور قوت مدافعت رکھنے والے 12 سے 17 سال تک عمر کے لوگ بھی فائزر ویکسین لگواسکتے ہیں تاہم انہیں اس کیلئے اپنے میڈیکل سرٹیفکیٹس دکھانا لازمی ہوں گے۔

این سی او سی نے آج سے 18 سال سے کم عمر افراد کو ویکسی نیشن لگانے کا سلسلہ شروع کیا ہے اور اب 17 سال کی عمر کے افراد بھی ویکسی نیشن سینٹرز جاکر خود کو ویکسین لگواسکتے ہیں۔

چیئرمین این سی او سی اسد عمر کا کہنا تھا کہ 17 سال سے کم عمر 15 اور 16 سال کے بچوں کو ویکسین لگانے کی تاریخ کا اعلان بھی جلد کردیا جائے گا۔

انہوں نے مزید کہا کہ ایک دن میں 10 لاکھ59 ہزار افراد کو ویکسین کی پہلی ڈوز لگائی، مجموعی طور پر اس ایک دن میں 15 لاکھ افراد کو ویکسین لگائی گئی ہے۔


Featured Content⭐


24 گھنٹوں کے دوران 🔥


From Our Blogs in last 24 hours 🔥


>