عالمی ادارہ صحت نے براعظم افریقہ کو پولیو سے پاک قرار دے دیا

پولیو جس سے ناقابل علاج معذوری ہو سکتی ہے، عالمی ادارہ صحت نے باقاعدہ اعلان کر دیا ہے کہ افریقہ کے 47 ممالک میں پولیو سے پاک ہو چکے ہیں۔ ڈبلیو ایچ او نے اس سنگ میل کی سرٹیفکیشن کا باقاعدہ اعلان کیا ہے۔

افریقہ میں وائلڈ پولیو کا آخری کیس 4 برس قبل نائیجیریا کے شمال مشرقی حصے میں سامنے آیا تھا۔ واضح رہے کہ پولیو ایک موذی اور ناقابل علاج معذوری دینے والی بیماری ہے جو بچوں کی ریڑھ کی ہڈی پر حملہ کر کے انہیں زندگی بھر کے لیے معذور بنا دیتی ہے۔

یہ 1950 کی دہائی میں ویکسین تیار ہونے تک دنیا کے مختلف حصوں میں پائی جاتی تھی، تاہم ایشیا اور افریقہ کے غریب ممالک کے لیے یہ ویکسین پہنچ سے باہر تھی۔

1988 کے آخر میں ڈبلیو ایچ او کے اعداد و شمار کے مطابق دنیا بھر میں وائلڈ پولیو کے ساڑھے 3 لاکھ کیسز موجود تھے، جبکہ 1996 میں صرف افریقہ میں اس کے 70 ہزار سے زائد کیسز پائے جاتے تھے۔

تاہم عالمی کوششوں اور 30 سال سے زائد عرصے سے فنڈنگ کے باعث رواں سال اس بیماری کے کیسز صرف افغانستان اور پاکستان میں سامنے آئے ہیں۔


Featured Content⭐


24 گھنٹوں کے دوران 🔥


From Our Blogs in last 24 hours 🔥


>