میانوالی: 3 بچوں سے زیادتی ،مقدمات درج

میانوالی کے علاقے میں کمسن بچوں سے جنسی زیادتی کے واقعات سامنے آئے ہیں ان واقعات میں ملزمان ان بچوں کی برہنہ ویڈیوز بنا کر انہیں ایک سال تک بلیک میل اور ہراساں کرتے رہے اور متعدد بار اپنی ہوس کا نشانہ بنایا۔

تفصیلات کے مطابق میانوالی کے تھانہ موچھ کی حدود میں جنسی زیادتی کے 3 واقعات پیش آئے پولیس نے تینوں کے مقدمات درج کر لیے ہیں تاہم ابھی تک کوئی گرفتاری عمل میں نہیں لائی گئی۔

ایف آئی آر کے مطابق درخواستگزار نے مؤقف اپنایا ہے کہ اس کے10 سالہ بیٹے سے حمزہ، ذیشان اور حسن نامی ملزموں نے زیادتی کی اور اس کی برہنہ حالت میں ویڈیو بناتے رہے، جسے بلیک میل کرنے کے لیے استعمال بھی کیا گیا۔

دوسری ایف آئی آر میں بھی حمزہ، ذیشان اور حسن نامزد ملزموں میں شامل ہیں اس کے متن میں درخواست گزار کا کہنا ہے کہ اس کے9 سالہ بیٹے کو ذیشان اور حسن کے مہمان خانے میں زیادتی کا نشانہ بنایا گیا۔

تیسری ایف آئی آر میں ملزم خرم اور سرفراز نامزد ہیں، متن میں کہا گیا ہے کہ ملزموں نے کمسن بچے کو اپنے گھر لیجا کر زیادتی کا نشانہ بنایا اور ویڈیو بنا کر ایک سال تک ہراساں کر کے بار بار زیادتی کا نشانہ بناتے رہے ہیں اور پیسوں کا بھی مطالبہ کرتے۔

دوسری جانب پولیس نے تفتیش میں پتہ چلایا ہے کہ تھانہ موچھ کی حدود میں پیش آنے والے یہ تینوں واقعات پرانے ہیں جن میں سے 2 واقعات ذیشان اور حسن کی بیٹھک میں پیش آئے۔

  • L kaat do in khinzeeron kay.
    Also its time for Imran khan to realize that problem won’t go away by stressing on women clothing only. You gotta chop the dicks of rapists, and atleast set one case as an example, which he has failed to do in his tenure yet.


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >