اگر انصاف نہیں ملا تو کسی کو نہیں چھوڑوں گا، شوکت مقدم

اگر انصاف نہیں ملا تو کسی کو نہیں چھوڑوں گا، شوکت مقدم

اسلام آباد میں بہیمانہ انداز میں قتل ہونے والی نور مقدم کے والد شوکت مقدم نے اعلان کیا ہے کہ میں انصاف کا منتظر ہوں، اگر انصاف نہ ملا تو کسی کو نہیں چھوڑوں گا۔

خبررساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق میڈیا نمائندوں سے گفتگو کرتے ہوئے سابق سفارتکار شوکت مقدم نے کہا ہے کہ میں وزیراعظم عمران خان سے انصاف چاہتا ہوں اگر انصاف نہ ملا تو کسی کو چھوڑوں گا نہیں میں باپ ہوں اس کا۔

انہوں نے کہا کہ ملزم ظاہر جعفر کوئی مجنوں یا پاگل شخص نہیں ہے بلکہ ایک کرمنل دماغ کا شخص ہے، پولیس نے ملزم کو آلہ قتل کے ساتھ پکڑا، دوران گرفتاری ملزم نے پولیس ٹیم پر چاقو سے حملہ کیا اور ان پر فائرنگ کرنے کی کوشش کی تاہم حملہ ناکام رہا۔

شوکت مقدم نے بتایا کہ ملزم اپنی ماں کے کلینک پر ایک رجسٹرڈ تھراپسٹ کی حیثیت سے فرائض بھی سرانجام دیتا ہے، یہ اپنی کمپنی کا ڈائریکٹر بھی ہے، ایک پاگل آدمی رجسٹرڈ تھراپسٹ کیسے ہوسکتا ہے۔

واضح رہے کہ 20مئی کو اسلام آباد کے علاقے ایف سیون فور میں 28 سالہ نور مقدم کو تیز دھار آلے سے گلا کاٹ کر قتل کردیا گیا تھا، اسلام آباد کے تھانہ کوہسار میں نور کے والد مختلف ممالک میں پاکستان سفیر کی حیثیت سے فرائض سرانجام دینے والے شوکت مقدم کی مدعیت میں مقدمہ درج کرکے ملزم کو گرفتار کرلیا گیا ہے۔

  • پاکستان میں سب کچھ ممکن ہے سواے انصاف کے۔
    خاطر جمع رکھیں اس ملزم کو بھی
    بیماری کی بنیاد پر چھوڑ دیا جائے گا ۔

    لڑکی کی کردار کشی تو پہلے ہی سے شروع کر دی ہے ہمارے ملک کے با عزت لوگوں نے۔۔۔۔

  • شوکت مقدم نے بتایا کہ ملزم اپنی ماں کے کلینک پر ایک رجسٹرڈ تھراپسٹ کی حیثیت سے فرائض بھی سرانجام دیتا ہے، یہ اپنی کمپنی کا ڈائریکٹر بھی ہے، ایک پاگل آدمی رجسٹرڈ تھراپسٹ کیسے ہوسکتا ہے۔

    واضح رہے کہ 20مئی کو لاہور کے علاقے ایف سیون فور میں 28 سالہ نور مقدم کو تیز دھار آلے سے گلا کاٹ کر قتل کردیا گیا تھا،

    I feel your feelings. It had been much better if u had married her. You had not allowed her to live with him as mistress for 2-3 years.

    this would hve changed the situation. You were not able to control the situation then. How could u do it now.

    May Allah help you in your mission to get bastard prosecuted.

  • He is hurt and I side with him totally in the demand for justice.
    I hope he did his job with justice towards Pakistanis in the countries where he served as an ambassador. I say that in the name of him stating he has served and using that to threaten the government and the people of Pakistan.


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >