دوہرے قتل کیس میں مطلوب اشتہاری 27 سال بعد گرفتار

دوہرے قتل کیس میں مطلوب اشتہاری 27 سال بعد گرفتار

راولپنڈی کی تھانہ چونترہ پولیس نے قتل کے مقدمہ میں مطلوب اشتہاری مجرم کو 27 سال بعد گرفتار کرلیا۔

پولیس کا کہنا تھا کہ گرفتاری سے بچنے کے لیے اور اپنی شناخت چھپانے کے لئے ملزم محمد تاج ہر چھ ماہ کے بعد اپنا حلیہ تبدیل کرتا تھا جبکہ مقدمہ میں نامزد دیگر 6 ملزمان کو پہلے ہی گرفتار کیا جا چکا ہے۔

اکتوبر 1995 میں ملزم نے اپنے دیگر چھ ساتھیوں کے ساتھ مل کر دیرینہ دشمنی کو بنیاد بنا کر 2 افراد کا قتل کیا تھا۔

محمد آزاد اور محمد اقبال کو قتل کرکے ملزمان فرار ہوگئے تھے، بعد ازاں چونترہ پولیس نے محمد تاج کے دیگر ساتھیوں کو گرفتار کرلیا تھا جبکہ محمد تاج روپوش ہوگیا تھا، عدالت نے ملزم کو دوہرے قتل کے مقدمہ میں اشتہاری قرار دے دیا تھا۔

دوہرے قتل کے کیس میں محمد تاج کی گرفتاری کے لیے کوششیں جاری تھیں مگر ملزم گرفتاری سے بچنے میں کامیاب رہا، گزشتہ روز پولیس محمد تاج کو گرفتار کرنے میں کامیاب ہوگئی، اس سے اسلحہ بھی برآمد کیا گیا۔

پولیس کے مطابق ملزم کو عدالت میں پیش کرکے ریمانڈ حاصل کیا جائے گا۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >