میرا آج کا ہیرو گجرات کا بیٹا۔۔۔!

میرا آج کا ہیرو گجرات کا بیٹا۔۔۔!

تم شان ہو پاکستان کی !
میرا آج کا ہیرو گجرات کا بیٹا

اسپین میں 19 دن لگاتار انسانیت کو کرونا سے بچانے کے لئے اگلے محاذ پہ لڑنے والا ڈاکٹر
جو خود بھی اس کی لپیٹ میں آ گیا
مگر بیماری میں بھی اپنے فرائض نبھاتا رہا

ضلع گجرات کے ایک دور افتادہ گاؤں میں جنم لینے والا یہ نوجوان جس نے سینٹ فرانسس سکول سرائے عالمگیر سے ایف ایس سی کا امتحان پاس کیا ۔ اعلی تعلیم کے حصول کی خاطر لاہور مقیم رہا تشنگی علم اسے رومانیہ لے گئی جہاں سے یہ طب کی ڈگری لے کر ولائت چلا گیا وہاں کی فضا راس نہ آئی تو وطن لوٹ آیا۔ اس کا سارا کنبہ اسپین جانے والے اولین پاکستانیوں میں سے تھا سو یہ بھی 2007 میں عازم اندلس ہوا اور سیاحوں کے من بھاتے مرکز بارسلونا کو مسکن بنا لیا
کچھ کرنے کی لگن اور خداداد صلاحیتوں نے اس کے من میں ہجوم سے الگ اپنا راستہ بنانے کی جوت جگا دی سو اس نے 2009 میں بارسلونا یونیورسٹی سے ہسپانوی زبان کی تعلیم کے حصول کے ساتھ ساتھ ” خلیہ بافت اور اعضاء کی پیوند کاری ” میں ماسٹرز کر ڈالا
2015 میں میرا ہیرو بارسلونا کے سیکنڈری میڈیکل کئیر ہاسپٹل سانٹ آدریا دے بسوس سے بطور کنسلٹنٹ منسلک ہو گیا
یوں یہ اعزاز گجرات کے اس بیٹے کے نام لکھا گیا جو اسپین میں پہلا پاکستانی ڈاکٹر تھا جس نے جنرل میڈیسن میں اسپیشلائزیشن کو ممکن بنایا اپنے شعبے میں آسمان کو چھو لینے کی تڑپ لئے یہ امراض جگر کے معروف ادارے جوردی گول سے بطور ریسرچ فیلو وابستہ ہو گیا

چائنہ میں طوفان اٹھانے کے بعد کرونا وائرس نے جب اسپین میں پنجے گاڑے تو بارسلونا سب سے زیادہ متاثر ہونے والا شہر تھا جنگل کی آگ کی طرح پھیلنے والے اس وائرس نے لوگوں کی بڑی تعداد کو لپیٹ میں لے لیا اور ہلاکتیں شروع ہوئیں تو ہنگامی صورت حال نافذ ہو گئی ڈاکٹرز اپنے گھر بار چھوڑ کر لوگوں کو بچانے کے لئے اٹھ کھڑے ہوئے یہ وہ وقت تھا جب ابھی اس آفت کی شروعات تھی ڈاکٹرز کے لئے نہ تو ضروری حفاظتی اقدامات تھے نہ ہدایات کہ مریضوں کی دیکھ بھال کرتے ہوئے خود کو کیسے بچانا ہے

ایسے میں اپنے فرض کی پکار پر میرا ہیرو بھی اگلے محاذ پہ ڈٹا ہوا تھا جہاں انیس دن لگاتار یہ اپنے ساتھی ڈاکٹرز کے ہمراہ کرونا سے لڑتا رہا اس جنگ میں ایک ایک کر کے اس کے ساتھ کام کرنے والے ڈاکٹرز اور لیڈی ڈاکٹرز نڈھال ہو کر خود صاحب فراش ہوتے گئے اور پھر ایک دن اسکی باری بھی آ گئی بخار اور دیگر علامات نمودار ہونے پر اسے آئسولیشن میں بھیج دیا گیا اس نے بھی یہ کہہ کر خود کو دلاسا دے لیا کہ شاید دن رات کام نے تھکن طاری کر دی ہے لیکن یہ اس کا واہمہ تھا علامات نے شدت اختیار کی تو نوبت ٹیسٹ تک چلی آئئ ٹیسٹ ہوئے تو کچھ اعشارئیے نارمل نہ تھے جس پر ہاسپٹل نے اسے انڈر آبزرویشن رکھ لیا
حیرت ہے اس کی قوت ارادی پر عزم و حوصلہ پر اور فرض شناسی پر اس نے اپنے چاہنے والوں اور جاننے والوں کو ہوا تک نہ لگنے دی کہ دوسروں میں شفا بانٹنے والا خود گھائل پڑا ہے
بیماری کی حالت میں بھی یہ آڈیو اور ویڈیو کالز پر سو سے زائد ہم وطنوں کو دن رات کرونا وائرس کے علاج کے لئے رہنمائی کرتا رہا
اسے ایک اور محاذ پہ بھی لڑنا تھا ہوا یہ کہ بارسلونا میں لاک ڈاون ہوا تو میڈیکل عملے کی آمدو رفت میں دشواری پیدا ہونے لگی ایسے میں بارسلونا میں ٹیسکی سے وابستہ پاکستانی آگے بڑھے اور خدمت انسانیت کی ایک نئی تاریخ رقم کر دی یہ اعلان کر کے کہ ہم میڈیکل عملے کو فری پک اینڈ ڈراپ مہیا کریں گے اور اس عزم کے پیچھے میرے ہیرو کی موٹیویشن ولولہ انگیز شخصیت کا جادو اور اپنی کمیونٹی میں مقبولیت تھی اسے یہ فکر دامن گیر تھی کہ اس کی بیماری کی خبر عام ہوئی تو ان ٹیسکی والوں کے حوصلے ماند نہ پڑ جائیں
سو یہ اپنی بیماری سے لڑتا رہا
اپنے ہم وطنوں کو دن رات علاج معالجے کی سہولیات بلا معاوضہ آن لائن فراہم کرتا رہا
اور سب سے بڑی خدمت
یہ مسلسل اپنی فیس بک آئی ڈی سے کرونا وائرس کے بارے آگاہی امید اور حوصلہ بانٹتا رہا

اور حیرت اس بات کی ہے کہ بستر علالت پہ بھی یہ دوسروں کو حوصلہ اور راستہ دکھاتا رہا
اے اہل گجرات
انسانیت کی خاطر اپنی جان داو پہ لگا دینے والے اس ہیرو کو ایک عالم کی دعاؤں کے طفیل مالک کائنات نے نئی زندگی بخش دی گیارہویں روز اس کی رپورٹس نیگیٹیو آ چکی ہیں الحمد للہ رب العالمین

اور وہ ایک نئے عزم و حوصلے سے سرشار ایک بار پھر خدمت انسانیت کے لئے اگلے محاذ پہ جانے کو بے تاب یے
میرے اس ہیرو کا تعلق سرائے عالمگیر کے گاوں پوران سے ہے
جو نہ صرف ایک بہترین معالج ہے بلکہ ایک شاعر طرحدار بھی ہے
سماجیات اس کا من پسند موضوع ہے اور اس کے قلم کی کاٹ کا ایک زمانہ معترف ہے
ڈاکٹر عرفان مجید راجہ سلام ہے آپ کو
پاکستان کی پہچان ہیں آپ
گجرات کی دھرتی کا مان ہیں آپ
قلم قبیلے کی شان ہیں آپ


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >