چیمبر میں لڑکی کو زیادتی کا نشانہ بنانیوالے جج کے خلاف مقدمہ درج

Chamber Girl

سیہون: چیمبر میں لڑکی کو بیان قلمبند کرنے کے بہانے زیادتی کا نشانہ بنانے والے جج امتیاز حسین بھٹو کے خلاف مقدمہ درج کرلیا گیا۔

پسند کی شادی کرنے والی لڑکی سلمیٰ بروہی نے الزام لگایا تھا کہ جوڈیشل مجسٹریٹ امتیاز حسین بھٹو نے بیان لینے کے بہانے اپنے چیمبر میں بلایا اور سب کو باہر نکال کر اسے زیادتی کا نشانہ بنایا۔

سیہون پولیس اسٹیشن میں ایس ایچ او مظہر حسین نائچ کی مدعیت میں لڑکی سے زیادتی کا مقدمہ درج کیا گیا۔ سلمیٰ بروہی سے دارالامان لاڑکانہ میں لیے گئے تازہ بیان کے بعد جج کے خلاف قانونی کارروائی میں یہ پیش رفت ہوئی۔ ایف آئی ار میں جج کے خلاف مقدمے میں دفعہ 376 اور 506 شامل کی گئی ہیں۔

واضح رہے کہ جوڈیشل مجسٹریٹ سیہون امتیاز حسین بھٹو کو لڑکی کے ساتھ زیادتی کرنے پر مس کنڈکٹ کی بنیاد پر معطل کرکے سندھ ہائیکورٹ رپورٹ کرنے کی ہدایت کی گئی تھی۔ لڑکی کے الزام پر سندھ ہائیکورٹ نے نوٹس لیا اور جج کو مس کنڈکٹ کی بنیاد پر معطل کردیا گیا اور کئی دن گزرنے کے بعد اب جج کے خلاف لڑکی سے زیادتی کا مقدمہ درج کرلیا گیا ہے۔

  • اس بےغیرت کی انکھیں نکال کر اس سے مہنگا چشمہ پہنا دو یہ ججز اور وکیل، ایس ایچ او( پولیس ) لوگوں کے خلاف مقدمے بناتے اور فیصلہ کرتے ہیں، کیا یہ اس قابل ہیں اور ان پر اعتبار کیا جائے ؟؟؟

  • khwahish lagta hay aunty tu nay apnay saath kyee baar ziyaadtee karwaye bachpan say. jab larkee ghar say bhaag ker maan aur bbaap ko heart attack dey ker bhagay gee tu aisa he ho ga. makafaat e amal. khwahish aunty. ab tum ko koyee mard 25 saal ki umer mein koye dekhta hee nsahee, …goolian kha nafsiyaatee…


  • 24 گھنٹوں کے دوران 🔥

    View More

    From Our Blogs in last 24 hours 🔥

    View More

    This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept

    >