"ہمیں معاف کردیں، ہم مجبور تھے”-ڈاکوآٹا، دالیں، گھی لوٹ کرفرار

Daku

کراچی کے علاقے شریف آبادمیں لوٹ مارکی انوکھی واردات ۔۔ ڈاکوکریانہ اسٹور سے آٹا،دالیں،آئل گھی،مصالحے ،موبائل اورنقدی لوٹ کرلے گئے ۔۔ ڈاکوجاتے ہوئے ہوئے دکاندارسے یہ بھی کہہ گئے ہم مجبور ہیں۔ہمیں معاف کردیں

عتیق نامی دکاندار ، جس کی دکان پر یہ ڈکیٹی کی یہ واردات ہوئی ، نے بتایا کہ کہ وہ عرصے سے شریف آباد بلاک ون میں رہائش پذیر اور اسی علاقے میں کریانہ اسٹور چلاتے ہیں اتوار کی صبح انہوں نے ابھی اسٹور کھولا ہی تھا کہ موٹر سائیکل پرسوار آئے اور ان نے موبائل فون اورنقدی کے علاوہ 10کلو والے آٹے کے 2تھیلے، 10کلو سے زائد مختلف دالوں کے پیکٹ، آئل اورگھی کی 10تھیلیاں اور 5کلو مصالحوں کے پیکٹ اٹھائے اور موٹرسائیکل پر فرار ہوگئے۔۔

دکاندار کا مزید کہنا تھا کہ داکوؤں نے جانے سے پہلے مجھ سے کہا کہ وہ انتہائی مجبوری میں ڈکیٹی کی یہ واردات کررہے ہیں ، یہ ان کی زندگی کی پہلی واردات ہے لہٰذا انہیں معاف کردیا جائے، اگر ہم مجبور نہ ہوتے تو کبھی بھی یہ گھناؤنا کام نہ کرتے۔

دکاندار عتیق نے مزید بتایا کہ ڈکیت کم عمر تھے ، انہوں نے اپنے چہرے چھپائے ہوئے تھے ، ۔واردات کے دوران ایک سیلزمین بھی آیا تو ڈاکوؤں نے اس سے بھی موبائل فون اور نقدی چھین لی ۔

واضح رہے کہ کراچی میں لوٹ مارکی وارداتوں میں روزبروز اضافہ ہوتا جارہا ہے، ڈاکو نہ صرف راہ چلتے شہریوں کو لوٹ لیتے ہیں بلکہ دکانوں اور حتیٰ کہ ڈپارٹمنٹل اسٹورز پر بھی دیدہ دلیری سے وارداتیں کرتے ہیں،ڈپارٹمنٹل اسٹورز ، جیولری شاپس میں سی سی ٹی وی کیمرے نصب ہونے اور سی سی ٹی وی فوٹیجز پولیس کو فراہم کرنے کے باوجود پولیس انہیں پکڑ نہیں پاتی۔


24 گھنٹوں کے دوران 🔥

View More

From Our Blogs in last 24 hours 🔥

View More

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept

>