طلبہ یونینز کی بحالی پر ہائر ایجوکیشن کمیشن کا بڑا فیصلہ

ہائر ایجوکیشن کمیشن نے تعلیمی اداروں میں طلبہ یونین کی بحالی کی حمایت سے انکار کردیا

ایچ ای سی نے طلبہ تنظیموں کو مشاعرے، بحث و مباحثے، موسیقی اور کھیلوں جیسی صحت مندانہ سرگرمیوں کی تجویز پیش کی ہے۔۔ایچ ای سی نے رکن قومی اسمبلی کھیل داس کے پیش کردہ بل کے جواب میں کہا ہے کہ متحرک سیاست تعلیمی اداروں میں تشدد کا باعث بنتی ہےجبکہ یونینز سیاسی جماعتوں سے وابستگی کے باعث حکومت مخالف اتحاد کرتی ہیں۔تنظیمیں اثر و رسوخ اور طاقت حاصل کرتی ہیں جو کیمپسس میں تعلیم،تحقیق اور ترقیاتی کاموں کے لیے خطرہ ہیں۔طلبہ یونینز کی بحالی سے جامعات میں اصلاحات لانے کی حکومتی کوششوں کو نقصان پہنچے گا
9دسمبر 2019 کو سندھ کابینہ نے طلبہ یونین کی بحالی کابل منظورکیا تھا۔بل میں کہا گیا کہ اسٹوڈنٹ یونین کا کام سوشل اور اکیڈمک ویلفیئر کو بہتر کرنا ہوگا، کسی بھی تعلیمی ادارے، تعلیمی تربیتی ادارے میں یونین بنائی جاسکتی ہے۔


  • 24 گھنٹوں کے دوران 🔥

    View More

    From Our Blogs in last 24 hours 🔥

    View More

    This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept

    >