ایک جوڑے کے لاکھوں بٹورنے والے ڈیزائنر بھی ٹیکس چور نکلے،ایف بی آر نے نوٹس بھیج دیئے

مشہور ڈریس ڈیزائنرز ٹیکس نہ دینے پر ایف بی آر کے شکنجے میں آگئے

عروسی ملبوسات بنانے والے ملک کے 24 مہنگے ڈریس ڈیزائنر ز کو ایف بی آر نے نوٹسز جاری کردیئے ۔
ایف بی آر سے جاری نو ٹیفیکیشن کے مطابق ایک ایک لباس سے لاکھوں روپے کا منافع کمانے والے ڈریس ڈیزائنرز میں سے متعدد یا تو ٹیکس دیتے ہی نہیں ہیں ، ان میں سے چند اگر ٹیکس دیتے ہیں تو وہ نا ہونے کے برابر ہوتا ہے۔


ایف بی آر کا کہنا تھا کہ نئے ٹیکس پیئرز سے متعلق تحقیقات کے دوران اس سیکٹر میں ٹیکس چوری سے متعلق انکشاف ہوئے جس سے پتا چلا کہ لاکھوں روپے کے عروسی اور دوسرے ملبوسات بنانے والے ڈریس ڈیزائنرز سرے سے ٹیکس نیٹ میں رجسٹرڈ ہیں نہیں ہیں جس کے باعث ملکی خزانے کو سالانہ کروڑوں روپے کا ٹیکہ لگ رہا ہے۔
ایف بی آر کے مطابق وردہ سلیم’، ‘آمنہ چوہدری’،’ نتاشا کمال’ سمیت 24مشہور ڈیزائنرز کو نوٹسز جاری کیے گئے ہیں۔نوٹس میں کہا گیا ہے ان افراد کی آمدن ان کے فراہم کردہ گوشواروں سے مطابقت نہیں رکھتی، اس لئے ایف بی آر کو ملکی خزانے سے بھاری مالیت کی چوری کا خدشہ ہے

OR comment as anonymous below

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے


24 گھنٹوں کے دوران 🔥

View More

From Our Blogs in last 24 hours 🔥

View More